پارا چنار ،علی شیرزئی قبائل کا قومی جائیداد پر غیرقانونی تعمیرات مسمار کی جائیں

پارا چنار ،علی شیرزئی قبائل کا قومی جائیداد پر غیرقانونی تعمیرات مسمار کی ...

  



پاراچنار(نمائندہ پاکستان)ضلع کرم کے علی شیر زئی قبائل کے عمائدین نے کہا ہے کہ قومی جائیداد پر غیر قانونی تعمیرات روکنے کیلئے اقدامات کئے جائیں اور ناجائز تعمیرات مسمار کئے جائیں ورنہ قبائل احتجاج شروع کرنے پر مجبور ہونگے پاراچنار میں مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے علیشیرزئی قبائل کے عمائدین حاجی گلاب ، جنت میر ، جمالدار ، اسماعیل ، زاہد شاہ ، قاری محمد انور ، الف خان اور دیگر عمائدین نے کہا نے کہا کہ وسطی کرم کے علاقہ تیندو سمہ میں افغان مہاجرین سمیت غیر متعلقہ لوگوں نے تعمیرات کئے ہیں اور اب حکومت بعض منصوبے شروع کرنے کے بہانے ہمارے قومی جائیداد میں مزید تعمیرات کرنا چاہتی ہے جو ہمیں کسی صورت قبول نہیں اور ہمارے جائیداد پر زبردستی قبضہ کرنے کی کوشش کی گئی تو ہم قومی طور پر احتجاجی دھرنا شروع کریں گے اور مسلے کے حل تک احتجاج جاری رکھیں گے علی شیر زئی قبائل کے عمائدین نے کہا کہ 19 سال سے تیندو سمہ کے علاقے میں تیندو گاؤں کے لوگوں کے ساتھ اس جائیداد کے مسلے پر تنازعہ چل رہا ہے جن میں درجن سے زائد افراد جان بحق اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں مقامی عدالت کمشنر کوہاٹ اور فاٹا ٹریبونل نے ہمارے حق میں فیصلہ دیا ہے اور اب کیا پانچ سال سے سپریم کورٹ میں چل رہا ہے مگر اس کے باوجود ہمارے جائیداد پر غیر قانونی تعمیرات جاری ہیں علی شیر زئی قبائل کے عمائدین نے وزیر اعلی گورنر کور کمانڈر ڈپٹی کمشنر اور دیگر متعلقہ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ ان کے ساتھ ہونے والے زیادتیوں کا فوری طور نوٹس لیں اور انہیں احتجاج پر مجبور نہ کیا جائے

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...