مولانا خائستہ رحمان وفات پاگئے

مولانا خائستہ رحمان وفات پاگئے

  



تیمرگرہ ( بیورو رپورٹ )ممتاز عالم الدین مدرس اور مدرسہ تعلیم القرآن خال کے مہتمم مولانا خا ئستہ رحمان حرکت قلب بند ہونے سے انتقال کر گئے مولانا خائستہ رحمان نماز فجر کی ادائیگی کے لئے وضو کررہے تھے کہ انہیں دل کا دورہ پڑاجو جان لیوا ثابت ہوا انہیں فوری طور پر ڈسٹرکٹ ہید کواٹر ہسپتال تیمرگرہ منتقل کیا گیا لیکن جانبر نہ ہوسکا ان کی موت کی خبر علاقے میں جنگل کی اگ کی طرح پھیل گئی اور ان کی موت کی خبرسننے پر مدرسہ کے ہزاروں طلباء اور عوام دا ڑیں مارکر رونے لگے مولانا خائستہ رحمان گزشتہ پچاس سالوں سے درس وتدریس کے شعبہ سے منسلک تھے ان کے اندرون ملک اور بیرون ملک شا گردوں کی تعدادہزاروں میں ہیں مولانا موصوف کو علا قے میں بڑی قدر ومنزلت کی نگاہ سے دیکھا جاتا تھا مرحوم کو آبائی قبرستان خال میں سپرد خاک کیاگیا نماز جنازہ میں سیاسی رہنماوں، عمائدین علاقہ ، سرکاری حکام ،علماء کرام ، دینی مدارس کے ہزاروں طلباء سمیت ہزاروں افراد نے شرکت کی مولانا مرحوم کی نماز جنازہ ان کے بیٹے مولانا مصبا ح الحق نے پڑھا ئی اور ان کے بیٹے مولانا مصبا الحق کو ان کا جانشین بنا یا گیا ان کی موت سے علاقہ میں سوگ کا عالم رہا اور ان کی موت پر ہر انکھ اشکبار تھی

مزید : پشاورصفحہ آخر