محکمہ تعلیم میں کرپشن کے دروازے بند کر دیئے گئے،ضیاء اللہ بنگش

محکمہ تعلیم میں کرپشن کے دروازے بند کر دیئے گئے،ضیاء اللہ بنگش

  



کوہاٹ(بیورورپورٹ) محکمہ تعلیم میں کرپشن کے دروازے بند کر دیئے گئے بھرتیوں اور تبادلوں میں نہایت صاف اور شفاف طریقہ کار کو اپنایا گیا ہے گزشتہ دو مہینوں میں ضلع بھر میں اساتذہ کی جتنی بھرتیاں ہوئیں وہ ایک ریکارڈ ہے ہزاروں اساتذہ کی بھرتیوں اور ترقی کے عمل میں کوئی رشوت یا کرپشن کا الزام نہیں لگایا جا سکتا یہی وہ تبدیلی ہے جس کے لیے تحریک انصاف دو دہائیوں سے کوششوں میں مصروف تھی ان خیالات کا اظہار صوبائی مشیر تعلیم ضیاء اللہ بنگش نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کا وژن صرف ترقی نہیں بلکہ عوام کی بیداری بھی ہے وزیر اعظم عمران خان دو دہائیوں سے زیادہ عرصے سے عوام کے حق کے لیے لڑتے چلے آ رہے تھے اللہ کے فضل اور ان کی مسلسل کوششوں سے آج پاکستان کی قوم بیدار ہو چکی ہے اب پاکستان میں کرپشن اور لوٹ مار کرنے والوں کے لیے جیل کے سوا کوئی جگہ نہیں آج عمران خان کی مسلسل کوششوں کی وجہ سے ادارے آزاد ہو چکے ہیں ہماری عدلیہ نے طاقتور وزیر اعظم کو نااہل قرار دے کر گھر بھیج چکے ہیں انہوں نے مزید کہا کہ ماضی میں معمولی نوکریوں کی بھی بولی لگتی تھی مگر ہماری حکومت میں گزشتہ دو مہینوں میں سینکڑوں اساتذہ کی بھرتی کا عمل نہایت صاف اور شفاف طریقے سے مکمل کیا گیا ہے جبکہ سینکڑوں اساتذہ کرام کو اگلے گریڈ میں ترقی دے کر میرٹ کے مطابق ایڈجسٹ بھی کیا گیا ہے اس کے باوجود کوئی مستحق یہ نہیں کہہ سکتا کہ وہ میرٹ کے بجائے مک مکا کر کے آیا ہے کیوں کہ آج عمران خان نے نوجوانوں کو جگا دیا ہے وہ اپنے حق کے لیے آواز بلند کر سکتے ہیں انہوں نے مزید کہا کہ نوکریاں فروخت کرنے کا دور گزر چکا ہے عمران خان نے نوجوان نسل کو خواب غفلت سے بیدار کر دیا ہے انشاء اللہ عوام آنے والے چند مہینوں میں تبدیلی کے ثمرات دیکھے گی اس موقع پر ضیاء اللہ بنگش نے واض کیا کہ محکمہ تعلیم کے دفاتر کو کرپشن سے پاک کرنے کا عمل شروع ہو چکا ہے اگر کوئی بھی شخص کسی سے ٹرانسفر‘ ریٹائرمنٹ یا بھرتی کے لیے پیسوں کا مطالبہ کرتا ہے تو ایسے عناصر کی فوری نشاندہی کی جائے انہوں نے اس عزم کا بھی اظہار کیا کہ انشاء اللہ محکمہ تعلیم خیبر پختونخوا دوسرے صوبوں کے لیے ایک ماڈل ہو گا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...