کبیروالا ‘ دو ہلاکتیں ‘ ورثا کا لاشیں سڑک پر رکھ کر احتجاجی مظاہرہ ‘ ایک ملزم گرفتار

کبیروالا ‘ دو ہلاکتیں ‘ ورثا کا لاشیں سڑک پر رکھ کر احتجاجی مظاہرہ ‘ ایک ...

  



سرائے سدھو(نمائندہ خصوصی)غیرت کے نام پر قتل یا خود کشی معمہ حل نہ ہوسکا، قتل اور اغوا کے دو الگ الگ مقدمات درج، پوسٹ مارٹم کے بعد ورثا نے نعشیں کبیروالا جھنگ روڈ پر رکھ کرمظاہرہ کیا۔ اغوا کاروں کی گرفتاری تک روڈ بند کرنے کی دھمکی ،ایک اغوا کار کی گرفتاری اور اندراج مقدمہ پر روڈ کھول دیا گیا تفصیلات کے مطابق دو روز قبل نواحی موضع نند پور کی ماں بیٹی کی مبینہ خود کشی کا معمہ ابھی تک حل(بقیہ نمبر45صفحہ12پر )

نہ ہوسکا ورثا نے پوسٹ مارٹم کے بعد نعشیں کبیروالا جھنگ روڈ اڈا چوپڑ ہٹہ پر رکھ روڈ بند کردیا اور مطالبہ کیا کہ جب تک اغوا کنندگان کے خلاف مقدمہ درج کرکے انہیں گر فتار نہیں کیا جاتانعشیں دفن نہیں کریں گے تاہم پولیس تھانہ سرائے سدھو نے ماں بیٹی کے ورثا کی درخواست پر اغوا کرکے بداخلاقی کا نشانہ بنانے والے جاگیردار نزاکت علی اور تصور حسین کے خلاف زیر دفعہ 376ت پ مقدمہ درج کرکے ملزم نزاکت علی کو گرفتار کرلیا جس پر ورثا نے احتجاج ختم کرکے نمازہ جنازہ کے بعد ماں بیٹی کو ان کے آبائی قبرستان میں دفن کردیا دوسری طرف پولیس ابھی تک کسی حتمی نتیجہ پر تو نہیں پہنچ سکی لیکن پولیس نے زیر دفعہ 302ماں بیٹی کے قتل کا مقدمہ بھی نامعلوم ملزمان کے خلاف درج کرلیا ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...