چین‘ ماحول دوست توانائی کی پیداوار میں تیزی سے اضافہ

چین‘ ماحول دوست توانائی کی پیداوار میں تیزی سے اضافہ

  



بیجنگ (اے پی پی) چین نے کہا ہے کہ 2018 ء کے دوران اس کی صاف توانائی کی پیداوار میں تیزی سے اضافہ ہوا، سال کے دوران 700 ملین کلوواٹ سے زیادہ بجلی پیدا کی گئی۔قومی ادارہ برائے توانائی ’’ نیشنل انرجی ایڈمنسٹریشن ‘‘ کی جانب سے جاری بیان کے مطابق ملک میں صاف توانائی کے شعبے کی ترقی کے لیے حکومتی سطح پر متعدد اقدامات کیے گئے ہیں، اس ضمن میں سولر اور ونڈ انرجی کے وسیع تر فارم بنائے گئے ہیں جس کا مقصد 2030 ء تک ان ذرائع سے ملکی ٖضرورت کی 20 فیصد سے زیادہ بجلی انھی ذرائع سے حاصل کرنا بھی شامل ہے۔انھوں نے کہا کہ اس شعبے کی ترقی کے لیے چین بڑے پیمانے پر سرمایہ کاری کررہا ہے اور 2020 ء تک شمسی، ہوا ، پانی اور جوہری توانائی کے حصول کے لیے 2.5 ٹریلین یوان (373 ارب ڈالر) کی سرمایہ کاری کررہا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ صاف توانائی کی پیداوار کے ساتھ ساتھ آئل اینڈ گیس کے شعبوں کی ترقی کے لیے بھی کوششیں جاری رکھی جائیں گی۔

مزید : کامرس


loading...