مہمند میں امن بحال ہونے کے بعد تعلیمی ادارے کھو ل دیئے گئے

مہمند میں امن بحال ہونے کے بعد تعلیمی ادارے کھو ل دیئے گئے

  



مہمند(نمائندہ پاکستان) ضلع مہمند میں امن بحال ہوکرتعلیمی ادارے مکمل طور پر کھول دیئے گئے ہیں پاک افغان سرحدی علاقہ کو پر امن بناء کر روزمرہ کے معمولات جاری ہے قیام امن کیلئے فورسزکے جوانوں اور قبائل نے بے پناہ قربانیاں دی ہے ۔ان خیالات کا اظہار کمانڈنٹ مہمند رائفلز کرنلعرفانعلی نے پاک افغان سرحدی علاقوں کے دوروں کے موقع پر جوانوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت پورے ضلع میں امن بحال ہے پاک افغان سرحدی علاقے میں تمام تعلیمی ادارے کھول دیئے گئے ہیں فورسزکی لازوال قربانیوں کی وجہ سے علاقہ امن کا گہوراہ بن گیا پاک افغان سرحدی علاقہ کو محفوظ اور پر امن بناکر تجارت کیلئے کھولنے کی کوششیں جاری ہیں انھوں نے کہا کہ امن کو برقرار رکھنے کیلئے ہر قسم وسائل بروئے کار لینگے شرپسند اور ملک دشمن عناصر کے ساتھ سختی سے نمٹے گے۔پاک افغان سرحدی علاقوں میں سیکورٹی فورسز کے زیر نگرانی کئی تعلیمی ادارے کام کررہے ہیں جبکہ عوام کو مفت میڈیکل کیمپ کے مواقع بھی فراہم کئے جارہے ہیں جس سے علاقے میں تعلیمی حالت بہتر ہوجائے گی اس موقع پر صوبیدار میجر فردوس خان بھی موجود تھا ۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...