سینئروزیر علیم خان کی گرفتاری کی وجوہات سامنے آگئیں

سینئروزیر علیم خان کی گرفتاری کی وجوہات سامنے آگئیں
سینئروزیر علیم خان کی گرفتاری کی وجوہات سامنے آگئیں

  



اسلام آباد (ویب ڈیسک) سینئروزیر علیم خان کی گرفتاری کی وجوہات سامنے آگئیں، جن میں بتایا گیا ہے کہ ملزم نے آمدن سے زائدپاکستان اوربیرون ملک اثاثہ جات بنائے، بطور سیکرٹری سوسائٹی ملزم کرپشن اورکرپٹ پریکٹس میں ملوث پائے گئے۔

اے آر وائے نیوز کے مطابق علیم خان کی گرفتاری سے متعلق نیب کے پاس کافی شواہدموجودہیں، ممبرصوبائی اسمبلی ہوتے ہوئے پارک ویو کوآپریٹو سوسائٹی کے سیکرٹری بنے اور بطورسیکرٹری سوسائٹی کرپشن اور کرپٹ پریکٹس میں ملوث پائے گئے۔نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ ملزم نے آمدن سے زائدپاکستان اوربیرون ملک اثاثہ جات بنائے جبکہ ریئل اسٹیٹ کاروبار کیلئے مختلف کمپنیاں بنائیں اور خودسرمایہ کاری کی، ملزم نے 900 کنال کی زمین اپنی کمپنی ایم ایس اے اینڈ اے کے نام پرحاصل کی جبکہ مزید600 کنال زمین خریدی، سرمایہ کاری کیلئے پیسے کہاں سے آئے؟ذرائع کے مطابق علیم خان نیب کی تحقیقاتی کمیٹی کومطمئین نہ کرسکے۔

رپورٹ کے مطابق نیب کا کہنا ہے کہ 2005 اور 2006 میں یو اے ای ، یو کے میں آف شور کمپنیاں بنائی گئیں اور بطور صوبائی وزیرآف شورکمپنی ہیگزم انویسٹمنٹ اوورسیزلمیٹڈ کےنام سے بھی کمپنی بنائی جبکہ ملزم پرقانون شہادت کے دستاویزات ٹمپرکرنے کابھی الزام ہے۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد /قومی


loading...