یہ خانہ بدوشی مناسب نہیں، مجھے واپس جیل بھیجاجائے: نوازشریف

یہ خانہ بدوشی مناسب نہیں، مجھے واپس جیل بھیجاجائے: نوازشریف
یہ خانہ بدوشی مناسب نہیں، مجھے واپس جیل بھیجاجائے: نوازشریف

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) محکمہ داخلہ پنجاب نے میڈیکل بورڈ کی سفارش پر سابق وزیراعظم نوازشریف کو پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی منتقل کرنے کا فیصلہ کیا ہے لیکن سابق وزیراعظم دوسرے ہسپتال منتقلی کی بجائے جیل واپس جانا چاہتے ہیں اور انہوں نے سروسز ہسپتال کے ایم ایس کو جواب دیا ہے کہ یہ خانہ بدوشی مناسب نہیں، میں نے سامان باندھ لیا، واپس جیل بھیجا جائے ۔

مقامی میڈیا کے مطابق نوازشریف نے موقف اپنایاکہ پہلے بھی پی آئی سی جاچکاہوں، پھر سروسز لایاگیا، تین بورڈ یہاںمعائنہ کرچکے ہیں اور اب ایک مرتبہ پھر نئے ہسپتال لے جاناچاہتے ہیں، یہ خانہ بدوشی مناسب نہیں ، مجھے واپس جیل ہی بھیج دیاجائے ۔

یادرہے کہ میڈیکل بورڈ نے دل کے ہسپتال منتقلی کی سفارش کی تھی اور بورڈ کی سفارش پر ہی محکمہ داخلہ نے سابق وزیراعظم کو پی آئی سی منتقل کرنے کا فیصلہ کیا ہ ے جہاں ان کے کمرے کو سب جیل قراردیاجائے گا۔

مزید : اہم خبریں /قومی


loading...