عبد العلیم خان نیب میں پیشی پر آنے کے بعد گرفتار ہونے والی تیسری شخصیت 

عبد العلیم خان نیب میں پیشی پر آنے کے بعد گرفتار ہونے والی تیسری شخصیت 
عبد العلیم خان نیب میں پیشی پر آنے کے بعد گرفتار ہونے والی تیسری شخصیت 

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)سینئر صوبائی وزیر پنجاب اور وزیر اعظم عمران خان کے معتمد خاص عبد العلیم خان نیب دفتر میں پیشی پر آنے کے بعد گرفتار ہونے والی تیسری شخصیت ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق اس سے قبل نیب کی جانب سے گذشتہ سال  5جولائی کو سابق وزیر اعظم نواز شریف کے پرنسپل سیکرٹری اور انتہائی قریبی سمجھے جانے والے فواد حسن فواد کو آشیانہ ہاؤسنگ سکینڈل کی تحقیقات میں طلب کیا تھا اور ان کے جوابات سے مطمئن نہ ہونے پر انہیں گرفتار کر لیا گیا تھا۔ نیب کی جانب سے سابق وزیرا علیٰ پنجاب شہباز شریف کو بھی گذشتہ سال  5 اکتوبر کو صاف پانی کیس کی تحقیقات کیلئے طلبی کے نوٹس جاری کئے گئے تھے تاہم پیشی پر انہیں آشیانہ ہاؤسنگ سکینڈل میں گرفتار کر لیا گیا تھا۔نیب نے آج حکومتی صفوں میں کھلبلی مچاتے ہوئے صوبائی وزیر  پنجاب اور وزیر اعظم عمران خان کے قریبی ساتھی عبد العلیم خان کو  آمدن سے زائد اثاثوں اور آف شور کمپنی کی تحقیقات میں طلب کیا گیا تھا اور اسی دوران انہیں باضابطہ گرفتار کرلیا گیا ۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور


loading...