چودھری منظور نے علیم خان کی گرفتاری کیلئے نیب کی جانب سے استعمال کئے جانیوالے لفظ پر شکوک و شبہات کا اظہار کردیا

چودھری منظور نے علیم خان کی گرفتاری کیلئے نیب کی جانب سے استعمال کئے ...
چودھری منظور نے علیم خان کی گرفتاری کیلئے نیب کی جانب سے استعمال کئے جانیوالے لفظ پر شکوک و شبہات کا اظہار کردیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) پیپلز پارٹی کی رہنما چودھری منظور نے کہاہے کہ علیم خان کی گرفتاری پر اپوزیشن خوشی کے شادیانے نہیں بجارہی لیکن نیب کی جانب سے ان کی گرفتاری کیلئے” مبینہ“ لفظ استعمال ہواہے جو صحافی استعمال کرتے ہیں۔

دنیا نیوز کے پر وگرام ”آن د ا فرنٹ“ میں گفتگو کرتے ہوئے پیپلز پارٹی کے رہنما چودھری منظور نے کہا کہ علیم خان کی گرفتاری پر اپوزیشن خوشی کے شادیانے نہیں بجارہی لیکن نیب کی جانب سے ان کی گرفتاری کیلئے ”مبینہ“ لفظ استعمال ہواہے جو صحافی استعمال کرتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ دیکھنا یہ ہے کہ ان کی گرفتاری کے بعد کہیں علیمہ خان والامعاملہ تو نہیں ہوتا کہ علیم خان کے وزیر اعلیٰ پنجاب بننے کی راہ نہ ہموار ہوجائے ، گرفتاری عدالت کے ذریعے ہونی چاہئے ، نیب شواہد لیکر عدالت میں جائے اوراگر عدالت یہ سمجھے کے یہ کیس بنتاہے تو پھر کسی کوگرفتار کیا جائے ۔

انہوں نے کہا کہ اصول سب کیلئے ایک جیسا ہونا چاہئے ، گرفتار کرنا ہے تو سب کو کرلیں اور اگر چھوڑناہے تو سب کوچھوڑ دیں، ہم جیلیں کاٹ لیں گے لیکن تحریک انصاف کی قیادت سے جیلیں نہیں کاٹی جائیں گی۔

مزید : قومی