راولپنڈی میں آئی ٹی پارک، یونیورسٹی کا قیام ناگزیر: چیمبر آف کامرس

راولپنڈی میں آئی ٹی پارک، یونیورسٹی کا قیام ناگزیر: چیمبر آف کامرس

  

راولپنڈی (اے پی پی) راولپنڈی چیمبر آف کامرس کے زیر اہتمام دوسری سمارٹ ٹیکنالوجی نمائش اختتام پذیر ہو گئی۔ نمائش کا مقصد آئی ٹی کمپنیوں کو درپیش مسائل کو اجاگر کرنا اور ان کے حل تلاش کرنا تھا۔اس کے ساتھ ساتھ بز نس کمیونٹی کو جدید رجحانات سے آگاہی اور تجارت کے فروغ کے لیے جدید ٹیکنالوجی کے استعمال کو فروغ دینا تھا۔ نمائش مقامی ہوٹل میں ہوئی جس میں مختلف کمپنیوں نے سٹالز لگا رکھے تھے۔ شہریوں کی ایک کثیر تعداد نے شرکت کی اور روبوٹس، ڈرونز، ڈیجیٹل مصنوعات، میڈیکل سامان، آئی ٹی مصنوعات میں گہری دلچسپی لی۔ نمائش کے آخری روز صدر چیمبر صبور ملک نے میڈیا کو بریفنگ میں بتایا کہ پاکستان میں آئی ٹی کا شعبہ ایک صنعت کا درجہ اختیار کر گیا ہے۔ برآمدات کے فروغ کے لیے ہمیں نئے اور غیر معروف شعبوں کو آگے لانا ہو گا۔نمائش میں پی ٹی سی ایل، نسٹ یونیورسٹی، کیپیٹل یونیورسٹی، ماڈرن انجینرنگ سمیت کئی اہم کمپنیوں اور اداروں نے سٹالز لگائے تھے۔ صبور ملک نے مزید کہا کہ ہم نے سفارشات مرتب کیں ہیں جنھیں حکومت اور وزرات آئی ٹی تک پہنچایا جائے گا۔ ہمارے اہم مطالبات میں سوفٹ وئیر ایکسپورٹس کے لیے ٹیکس چھوٹ، مراعات، فری لانسرز کے لیے اکاونٹ کھولنے اور راولپنڈی میں آئی ٹی پارک اور یونیورسٹی کا قیام شامل ہے۔ اس موقع پر سابق صدر اور گروپ لیڈر سہیل الطاف نے کہا کہ یہ راولپنڈی چیمبر آف کامرس کا خاصا کہ کہ یہ ہمیشہ لیڈ لیتا ہے اور غیر معروف شعبوں جیسے آئی ٹی کو آگے لانے کے لیے کوشاں ہے۔ کنوئینرایکسپو راجہ عمر اقبال نے بتایا کہ کانفرنس اور نمائش سے آئی ٹی مصنوعات اور مستقبل کے چیلنجز سے آگاہی ملے گی۔ سینئر نائب صدر نوشراوان خلیل خان، نائب صدر حمزہ سروش، سابق صدور، مجلس عاملہ کے اراکین،ڈپٹی کنوینئر کرنل ریٹائرڈ عزیز احمد، انجمن تاجران کے نمائندے اور شرکا بھی اس موقع پر موجود تھے۔

مزید :

کامرس -