بلقیس ایدھی ہوم میں شادی شدہ لڑکی پر اسرار طور پر جاں بحق

بلقیس ایدھی ہوم میں شادی شدہ لڑکی پر اسرار طور پر جاں بحق

  

لاہور(کرائم رپورٹر)گرین ٹاؤن کے علاقہ بلقیس ایدھی ہوم میں ایک جواں سالہ لڑکی کائنات گل پر اسرار طور پر جاں بحق ہو گئی ہے جس کی لاش اقبال ٹاؤن کے علاقہ ایدھی سینٹر بھجوادی گئی ہے، کائنات گل نے آٹھ ماہ قبل عابد نامی لڑکے سے ادارہ کاشانہ ہوم میں شادی کی تھی،بعد ازاں وہ بلقیس ایدھی ہوم گرین ٹاؤن میں رہ رہی تھی جبکہ اس کا شوہر عابد اپنے اہلخانہ سمیت پچھلے دوماہ سے گھر سے غائب ہے بتایا گیا ہے کہ کائنات لاوارث ہونے کی وجہ سے ادارہ کاشانہ ہاؤس میں رہتی تھی اور وہاں کی انتظامیہ نے جون 2019 میں اس کی شادی کر دی تھی،عابد کے مطابق شادی کے ایک ماہ بعد کائنات گل نے تیزاب پی لیا، وہ اس کا کافی عرصہ گنگا رام ہسپتال میں علاج کرواتے رہے بعد ازاں کائنات گل پراسرار طور پر بلقیس ایدھی ہوم گرین ٹاؤن پہنچ گئی اور گزشتہ روز اس کی موت واقع ہوگئی ہے،کائنات گل کی ہلاکت کی اطلاع پر کاشانہ ہوم کی سابق سپرنٹنڈنٹ افشاں لطیف لاش لینے ایدھی سینٹر اقبال ٹاؤن پہنچ گئی لیکن ایدھی انتظامیہ نے اسے لاش دینے سے انکار کردیا ہے۔افشاں لطیف کا کہنا ہے کہ اس لڑکی کو پہلے گھر سے اغواء کر کے میڈیا پر حکمران جماعت کے ایک وزیر نے اس کے خلاف کم عمری میں شادی کروانے کاالزام لگایا تھا اب اسے قتل کر دیا گیا ہے۔اس کی اعلی سطحی انکوائری ہو نی چاہئے۔

مزید :

علاقائی -