گوجرانوالہ: 3سالہ بچہ کھلے مین ہول میں گر کر جاں بحق، ورثا ء کا نعش سڑک پر رکھ کر احتجاج

گوجرانوالہ: 3سالہ بچہ کھلے مین ہول میں گر کر جاں بحق، ورثا ء کا نعش سڑک پر رکھ ...

  

گوجرانوالہ(بیورورپورٹ) گوجرانوالہ میں محنت کش کا 3سالہ بیٹا کھیلتے ہوئے گلی میں کھلے مین ہول میں گر کر جاں بحق ہو گیا جبکہ ورثاء اور اہل علاقہ نے بچے کی لاش کو مین سڑک پر رکھ کر واسا افسران اور کمیٹی والوں کیخلاف شدید احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے ٹائر جلائے اور نعرے بازی کی تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز عالم چوک کے قریب کوٹ اسحاق کے رہائشی محنت کش منصور احمد کا 3سالہ بیٹا اسد اللہ گلی میں کھیلتے ہوئے اچانک وہاں پر صفائی کیلئے کھولے گئے مین ہول میں گرکر ہلاک ہو گیا واقعہ کی اطلاع ملتے ہی لوگوں کی بڑی تعداد موقعہ پر اکٹھی ہوگئی اور اُنہوں نے بچے کے ورثاء کے ہمراہ بچے کی لاش کو مین حافظ آباد روڈ پر رکھ کر شدید احتجاج مظاہرہ کیا اور ٹائر جلائے جس سے سڑک کے دونوں اطراف ٹریفک کئی گھنٹے جام رہی یہاں پر امر قابل ذکر ہے کہ عرصہ دراز سے کوٹ اسحاق اور اس کی ملحقہ آبادیوں کا سیوریج سسٹم بری طرح ناکافی سے دوچار ہے اور پوری پوری آبادی گٹروں سے نکلنے والے پانی کی جمع ہونے سے کسی بڑے جوہڑ کا نقشہ پیش کرتیں ہیں اوراس سلسلے میں میونسپل کارپوریشن،واسا،میونسپل کمیٹی لدھے والا وڑائچ اورضلعی انتظامیہ کومتعدد بار آگاہ کرنے کے باوجود اس سنگین مسئلے کو ابھی تک حل نہیں کیا گیا جبکہ بچے کی ہلاکت کا سنتے ہی اُسکی والدہ پر سکتہ طاری ہو گیا اور خواتین کی بڑی تعداد میں بین کرتے ہوئے سرکاری اہکاروں کو بدعائیں دیتی رہیں تاہم اس سلسلے میں ڈپٹی کمشنر گوجرانوالہ لیفٹیننٹ (ر)سہیل اشرف نے بتایا کہ مذکورہ واقعہ کا فوری نوٹس لیکر 4افسران پر مشتمل انکوائری ٹیم تشکیل دیکر اُن سے چوبیس گھنٹوں میں رپورٹ طلب کرلی گئی ہے اور کہا ہے کہ انکوائری میں ذمے دار ٹھہرائے جانے والوں کے خلاف فی الفور فوجداری ایکٹ کے تحت کاروائی کی جائے گی۔

مین ہول

مزید :

صفحہ آخر -