'45فیصد شوگرملزمالکان پی ٹی آئی کے ارکان'، خواجہ آصف نے مہنگائی سے متعلق اہم مطالبہ کردیا

'45فیصد شوگرملزمالکان پی ٹی آئی کے ارکان'، خواجہ آصف نے مہنگائی سے متعلق اہم ...
'45فیصد شوگرملزمالکان پی ٹی آئی کے ارکان'، خواجہ آصف نے مہنگائی سے متعلق اہم مطالبہ کردیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما اور رکن اسمبلی خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ لوگوں کو چور کہنا اور اپنی بغل میں چور لے کر بیٹھے رہنا،یہ کیا ہے؟انہوں نے مطالبہ کیا کہ مہنگائی سے متعلق ارکان اسمبلی کی کمیٹی بنائی جائے۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کے اجلاس میں اظہارخیال کرتے ہوئے خواجہ آصف نے حکومتی حلقوں کا تنقیدکا نشانہ بنایا ہے، انہوں نے کہالوگوں کو چور کہنا اور اپنی بغل میں چور لے کر بیٹھے رہنا،یہ کیا ہے؟۔حکومتی صفوں میں موجود ڈاکو اور چور حکومت کو لے بیٹھیں گے،ان ڈاکو اورچوروں کا پیٹ ہی نہیں بھرتا۔لوگوں کو چور کہنا اور اپنی بغل میں چور لے کر بیٹھے رہناملکی تاریخ میں قوم کے ساتھ بڑی زیادتی ہوئی۔

انہوں نے کہا عوام کے حقوق کا تحفظ ہمارا بنیادی حق ہے اور مہنگائی عوام کا بنیادی مسئلہ ہے،مہنگائی میں دھکیل کرارکان اسمبلی عوام کےساتھ بےوفائی کریں گے۔لیگی رہنماخواجہ آصف نے تجویز دی کہ اسپیکر اسمبلی ایوان میں مہنگائی پر بحث کرائیں۔ خواجہ آصف نے مطالبہ کیا کہ مہنگائی سے متعلق ارکان اسمبلی کی کمیٹی بنائی جائے جو ملک کو لوٹنے والوں کا تعین کرے۔لیگی رہنما نے کہا45فیصدشوگر ملز پی ٹی آئی ارکان کی ہیں،کون چینی مہنگی کرکے اربوں روپے کما رہے ہیں؟۔خواجہ آصف نے کہا زرداری اور نوازشریف کی شوگر ملز بند ہیں۔

انہوں نے کہاوزیراعظم عمران خان نے کل چوروں اور ڈاکووَں کا ذکر کیا،کیا عمران خان کو اپوزیشن میں ہی چور اور ڈاکو نظر آتے ہیں؟

ملک میں لوگ آٹے کےلیے ترس رہے ہیںمہنگائی بڑھ گئی ہے حکومت اس پر کیا کررہی ہے۔

خواجہ آصف نے چین میں پھیلے کرونا وائرس اور وہاں پھنسے پاکستانیوں کے حوالے سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ چین میں پاکستانی طلبہ کا خیال رکھا جارہاہے لیکن انہیں واپس لایاجائے،تمام ممالک نے چین سے اپنے شہریوں کو نکال لیا،پاکستانی طلبہ کو نکالنا حکومت کی ذمہ داری ہے۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -