کشمیریوں پر بھارتی مظالم کو بے نقاب کرنے کے لیے کوپن ہیگن ٹاؤن ہال کے باہر  تصویری نمائش کا اہتمام

کشمیریوں پر بھارتی مظالم کو بے نقاب کرنے کے لیے کوپن ہیگن ٹاؤن ہال کے باہر ...
کشمیریوں پر بھارتی مظالم کو بے نقاب کرنے کے لیے کوپن ہیگن ٹاؤن ہال کے باہر  تصویری نمائش کا اہتمام

  

ڈنمارک (اکرم باجوہ)تحریک کشمیر ڈنمارک نے کوپن ہیگن ٹاؤن ہال کے باہر  مقبوضہ کشمیر میں ہونے والے بھارتی مظالم کے خلاف اورکشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لئے ’’ یوم یکجہتی کشمیر ‘‘ کے عنوان سے تصویری نمائش کا اہتمام کیا   جس کا مقصد ڈینش برادری کو بتانا تھا کہ کس طرح بھارتی فوج مقبوضہ کشمیر کے نہتے کشمیریوں پر ظلم و بربریت کے پہاڑ ڈھا رہی ہے۔  ڈینشوں کی کثیر تعداد نے کشمیر میں ہونے والے ظلم و ستم کی منہ بولتی تصاویر کو اپنی آنکھوں سے دیکھا ۔

تصویری نمائش کا باقاعدہ افتتاح تحریک کشمیر ڈنمارک کے صدر عدیل آسی نے کیا۔  اس موقع پر تحریک کشمیر ڈنمارک کے صدر نے کہا کہ ہم نے اس تصویری نمائش میں تصاویر کے ذریعے بھارتی افواج کےمظالم کو دکھایا ہے۔ اس موقع پر اشفاق ابدالی نے کہا پاکسانی ہر فورم پر کشمیری بہن بھائیوں کے لیے آواز بلند کرے گا۔  روحینہ طاہر نے کہا کہ ڈنمارک کی سخت ترین سردی منفی ۱۰ درجہ حرارت اور سخت ترین کوویڈ 19 کے ایس او پی کا خاص خیال رکھتے ہوئے  ہم یہاں کشمیروں کی یکجتی کے لیے کھڑے ہیں ۔ شہزاد عثمان بٹ نے کہا کے ہم بھارت کی نام نہاد جمہوریت کا پردہ چاک کرنے آئے ہیں ۔

ملک طاہر صاحب نے کہا  جنت نظیر وادی کشمیرمیں غاصب بھارت نے ناجائز قبضہ کرکے وہاں کے باسیوں کے تمام حقوق سلب کر رکھے ۔ معروف پنجابی شاعر ظفر اعوان نے کہا کہ سیاسی محاذ پر جنگ کے علاوہ ادبی محاذ پر بھی بھارت سے لڑیں گے ۔ تحریک کشمیر کے سرپرست میاں منیر احمد نے کہا کشمیر میں عام شہریوں کی ہلاکتیں معمول بن گئی ہیں فورسز کو عوام کے خلاف تمام حربے اپنانے کی کھلی چھوٹ دی گئی ہے۔ اس تصویری نمائش میں ڈینش شہریوں نے کشمیرمیں مسلسل ہلاکتوں اور پیلیٹ گن کے استعمال پر زبردست تشویش کا اظہار کیا ۔

مزید :

بین الاقوامی -