دہشتگردی کی ہر شکل میں مذمت کرتے ہیں ؛ کشمیر پاکستان کے موقف میں تبدیلی نہیں آئے گی ، صدر مملکت

دہشتگردی کی ہر شکل میں مذمت کرتے ہیں ؛ کشمیر پاکستان کے موقف میں تبدیلی نہیں ...

  

 اسلام آباد(آئی این پی) صدر ممنون حسین نے کہا ہے کہ پٹھان کوٹ سمیت دہشت گردی کی ہر شکل کی مذمت کرتے ہیں،کشمیر پر پاکستان کے اصولی موقف میں کوئی تبدیلی نہیں آئے گی،کشمیری عوام کے حق خود ارادیت کی مکمل حمایت کرتے ہیں،کشمیری عوام پر مظالم کا سلسلہ بند ہونا چاہیے،کشمیری عوام کا حق خود ارادیت پاکستان کی خارجہ پالیسی کی بنیاد ہے،کشمیر مسلم اکثریتی کا علاقہ ہے آبادی کا تناسب بدلنے کی کوئی کوشش کامیاب نہیں ہوگی۔منگل کو یہ بات انھوں نے کشمیری قیادت سے ملاقات کے دوران کہی۔صدر مملکت سے کشمیری قیادت کی ملاقات قائد اعظم کی سالگرہ تقریبات کا حصہ ہے۔ ملاقات میں آزاد کشمیر کے صدر،وزیراعظم،وفاقی وزیر امور کشمیر سیاسی قیادت اور حریت کانفرنس کے رہنما بھی موجود تھے ۔صدر ممنون حسین نے کہاکہ کشمیر پر پاکستان کے اصولی موقف میں کوئی تبدیلی نہیں آئے گی۔ پٹھان کوٹ سمیت دہشت گردی کی ہر شکل کی مذمت کرتے ہیں۔ انھوں نے کہاکہ کشمیر مسلم اکثریتی کا علاقہ ہے آبادی کا تناسب بدلنے کی کوئی کوشش کامیاب نہیں ہوگی۔ صدر ممنون حسین نے کہاکہ کشمیر تقسیم بر صغیر کا نامکمل ایجنڈا ہے، کشمیری عوام کے حق خود ارادیت کی مکمل حمائت کرتے ہیں۔ کشمیری عوام پر مظالم کا سلسلہ بند ہونا چاہیے۔صدر ممنون حسین نے کہاکہ کشمیری عوام کا حق خود ارادیت پاکستان کی خارجہ پالیسی کی بنیاد ہے۔

مزید :

علاقائی -