بداخلاقی کیس ،ملزمان کا2روزہ جسمانی ریمانڈ ،14سالہ طالبہ تاحال بیان دینے کے قابل نہ ہوسکی

بداخلاقی کیس ،ملزمان کا2روزہ جسمانی ریمانڈ ،14سالہ طالبہ تاحال بیان دینے کے ...
بداخلاقی کیس ،ملزمان کا2روزہ جسمانی ریمانڈ ،14سالہ طالبہ تاحال بیان دینے کے قابل نہ ہوسکی

  

لاہور(نامہ نگار )چودہ سالہ لڑکی سے اجتماعی بداخلاقی کیس کے مرکزی ملزم عدنان ثنا اللہ سمیت8ملزمان کے جسمانی ریمانڈ میں دو روز کی توسیع کردی گئی،متاثرہ لڑکی بیماری کے باعث گزشتہ روز بھی عدالت میں پیش نہ ہوسکی ،عدالت نے بیان قلمبند کروانے کے لئے لڑکی کو 11جنوری کو طلب کرلیاہے۔

جوڈیشل مجسٹریٹ شفیق احمد کی عدالت میں پولیس نے بداخلاقی کیس میں ملوث عدنان ثنا اللہ اور بلال سمیت 8ملزمان کو 3 روز ہ جسمانی ریمانڈ ختم ہونے پر کینٹ کچہری میں پیش کیا۔ پولیس نے استدعا کی کہ ملزمان کامزید تین روزہ جسمانی ریمانڈ دیا جائے ،ملزم سے ابھی ویڈیو فلم برآمد کرنی ہے جس میں دیگر ملزمان کی موجودگی دکھائی گئی ہے۔ ملزمان کے وکلانے ریمانڈ کی مخالفت کی۔ ان کا کہنا تھا کہ پولیس ریمانڈ لے لیتی ہے لیکن کارروائی سے عدالت کو آگاہ نہیں کیا جاتا، ملزمان کو اجتماعی بداخلاقی کیس میں ملوث کیا جا رہا ہے تاہم عدالت نے دلائل کے بعد قانونی تقاضے پورے کرنے کی خاطر پولیس کی استدعا منظور کرتے ہوئے مزید دو روز ہ جسمانی ریمانڈ دے دیاہے۔ متاثرہ لڑکی بیمار ہونے کی وجہ سے گزشتہ روز عدالت میں پیش نہ ہو سکی، عدالت نے حکم دیا کہ لڑکی کو 11جنوری کو عدالت میں پیش کیا جائے تاکہ اس کا بیان قلمبند کیا جا سکے۔

مزید :

لاہور -