محکمہ وائلڈ لائف کیخلاف تحریک التوائے کار پنجاب اسمبلی میں جمع

محکمہ وائلڈ لائف کیخلاف تحریک التوائے کار پنجاب اسمبلی میں جمع

لاہور(نمائندہ خصوصی) پاکستان تحریک انصاف کے رکن پنجاب اسمبلی ڈاکٹر مراد راس نے ایک تحریک التوائے کار پنجاب اسمبلی میں جمع کروا دی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ نجی اخبار کی خبر کے مطابق محکمہ وائلڈ لائف کی ملی بھگت سے نایاب پردیسی پرندوں کی نسل کشی جاری ، پابندی کے باوجود شکاریوں کو تمام قسم کے پرندوں کا شکار کھیلنے کی کھلی چھٹی دے دی گئی ،وائلڈ لائف انچارج دوستیاں نبھانے میں مصروف ہیں۔

سردی کی شدت میں اضافہ کیساتھ ہی غیر ملکی پرندے سیالکو ٹ کے مختلف دیہی علاقوں ،دریائے چناب کے کنارے واقع جوہڑوں اور تالابوں پر آجاتے ہیں جس میں زیادہ تر نسلوں کو عالمی و حکومتی سطح پر تحفظ دینے کے باعث ان پرندو ں کے شکار پر پابندی ہے ان پرندوں میں مگ ، سرخاب ، تلورو دیگر نایاب نسلیں شامل ہیں محکمہ وائلڈ لائف نے صرف ہفتہ اتوار کو چند پرندو ں کے شکار کی اجازت دے رکھی ہے مگر ضلع بھر میں شکاری پابندی کے احکامات کی پرواہ نہ کرتے ہوئے روزانہ سرعام شکار کرتے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4