ہنگو ،سٹیزن فارپیس کا پہلا بجٹ پیش

ہنگو ،سٹیزن فارپیس کا پہلا بجٹ پیش

ہنگو(بیورورپورٹ)سٹیزن فار پیس اینڈ ڈویلپمنٹ انیشٹوز (سی پی ڈی آئی)نے یوتھ ویلفئیر بلڈون ایسو سی ایشن کے ساتھ ملکر ہنگو کا پہلا سٹیزن بجٹ پیش کیا۔ اس موقع پر ہنگو ایچ آر ایس پیردفتر میں پریس کانفرنس اور بعد ازاں اجلاس کے دوران سی پی ڈی آئی کے صوبائی کوارڈنیٹر جمشید طارق اور ایگزیکٹو ڈائریکٹر جہانزیب جانی نے کہا کہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی بات سٹیزن بجٹ ضلعی سطح پر بنایا گیا ہے۔بجٹ کے مختلف پہلووں کو سمجھنے کے لئے سٹیزن بجٹ کو تکنیکی زبان سے مبرا اور عام فہم بنایا جا تا ہے۔انہوں نے کہا کہ اس دستاویزکو بنانے کا مقصد ضلع ہنگو کے شہر یوں کو تعلیم، پانی اور نکاسی آب کے شعبہ جات سے متعلق ترقیاتی بجٹ کے اہم نکات سے آگاہ کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سال 2017۔18 کے صوبائی اور ضلعی بجٹ کے ترقیاتی حصہ میں سے ضکع ہنگو کے تعلیمی شعبہ کے کئے 133,256,000 روپے مختص کئے گئے ہیں جو کل ضلعی ترقیاتی بجٹ کا 12.2 فیصد ہے۔ انہوں نے کہا کہ صحت کے شعبہ میں 1.5فیصد کے حساب سے 16,628,000 روپے حاصل ہقئے ہیں۔پانی اور نکاس آب کے شعبہ کا ترقیاتی حصہ 25,000,000 روپے ہے جو کہ کل ضکعی ترقیاتی مختص شدہ بجٹ کا 2.3 فیصد حصہ ہے۔ یوتھ ویلفئیر بلد ڈونر ایسوسی ایشن کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر جہانزیب جانی نے کہا کہ اس معلومات سے ہنگو کے شہری اپنے ضلع کے بجٹ میں مختص رقوم اور اخراجات پر نظر رکھ سکتے ہیں اورنتیجتاً وہ اگلے سال اپنی ضروریات کے مطابق ترقیاتی منصوبوں پر تجاویز پیش کرنے کے لئے بہتر طور پر تیار ہوں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس کوشش سے بجٹ سے متعلقہ معلومات کی شئیرنگ اور بجٹ احتساب کے رواج کو بھی فروغ ملے گااورمذکورہ بجٹ '' ڈیموکریٹک لوکل گورننس فار ڈیلوپلمنٹ ان پاکستان''پروجیکٹ کے تحت تیار کیاگیا ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر