مہمند ایجنسی کا باشندہ سعودی عرب روڈ حادثہ میں جاں بحق

مہمند ایجنسی کا باشندہ سعودی عرب روڈ حادثہ میں جاں بحق

مہمند ایجنسی( نمائندہ پاکستان ) مہمند ایجنسی کا رہائشی سعودی عرب روڈ ایکسڈنٹ میں جان بحق جوان آبائی گاؤں میں سپرد خاک تفصیلات کے مطابق تحصیل پنڈیالی کے علاقے مارے کور کے 30سالہ جوان ریحان خان جو سعودی عرب روڈ ایکسڈنٹ میں جان بحق ہوا تھالاش دس دن کے بعد اپنے آبائی گھر لائی گئی ۔والدین کا کہنا تھا کہ ریحان کی صرف تین بیٹیاں ہیں جو بہت چھوٹی ہے کوئی بیٹا نہیں تھا ، ہم ایک پرانے گھر میں رہ رہے تھیں تو ریحان نے کہا کہ میں سعودی عرب جارہا ہوں اور تب تک واپس نہیں آؤنگا جب تک آپ لوگوں کیلئے نیا گھر نہیں بناؤنگا۔سعودی عرب میں تین سال محنت مزدوری کرکے جب اس نے 20دسمبر کوگھر فون کیا تو والدین نے بتایا کہ بیٹا ہم نے نیا گھر بنایاہے اب آپ گھر آجائے تو ریحان نے اپنے کفیل سے چھٹی کی درخواست کی جو 31دسمبر سے تین مہینوں کی چھٹی مل گئی ۔لیکن قسمت کو کچھ اور منظور تھا جب وہ 25دسمبر کو واپسی کی تیاری کے سلسلے میں والدین اور بچیوں کی خریداری کیلئے بازارجارہا تھا کہ راستے میں اس کی گاڑی کو حادثہ پیش آیاجس میں وہ موقع پر دم توڑگیا۔ ان کی نعش دس دن کے بعد گزشتہ روز ان کے آبائی گاؤں لائی گئی تو گھر والوں پر قیامت صغریٰ برپا ہوگیااور علاقے میں کہرام مچ گیا ۔اس کے جنازے میں علاقے کے ہزاروں لوگوں اور سیاسی عمائدین نے شرکت کی اور اس کو ہزاروں اشک بارآنکھوں کے ساتھ سپرد خاک کردیا گیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر