سندھ میں اتائیوں کے خلاف کریک ڈاؤن کا آغاز کردیا گیا

سندھ میں اتائیوں کے خلاف کریک ڈاؤن کا آغاز کردیا گیا

کراچی (اسٹاف رپورٹر ) سندھ ہیلتھ کیئر کمیشن نے اتائیوں کے خلاف سندھ کے چار اضلاع میں بھرپور کارروائی شروع کردی ہے ، پہلے روز جیکب آباد شہر میں سات سے زائد اتائیوں کے کلینکس سیل اور 14 دیگر کو وارننگ جاری کردی گئیں ۔ تفصیلات کے مطابق سندھ ہیلتھ کیئر کمیشن کے انسداد اتائی ڈائریکٹیوریٹ کے تحت سندھ کے چار اضلاع جن میں جیکب آباد ، میرپور خاص ، ٹنڈواللہ یار او ربدین میں کارروائی شروع کردی گئی ہے جس کی قیادت انسداد اتائی ڈائریکٹیوریٹ کے ڈائریکٹر ایاز مصطفی کررہے ہیں ۔ پہلے روز جیکب آباد کی23 سے زائد کلینکس کا دورہ کیا جس میں سے 7 کو اتائی چلے رہے تھے ان کو فوری بند کردیا گیا جبکہ دو اتائی موقع سے فرار ہوگئے۔ ڈائریکٹر ایاز مصطفی نے 14 دیگر ڈاکٹروں وارننگ دیتے ہوئے کہاکہ وہ جلد سے جلد اپنے کلینکس کو سندھ ہیلتھ کیئر کمیشن سے رجسٹرڈ کروائیں اور دیگر دستاویزات کی تصدیق کروائیں بصورت دیگر ان کے کلینکس کو سیل کردیا جائے گا۔ اس موقع پر سندھ ہیلتھ کیئر کمیشن کے سی ای او ڈاکٹر مہناج قدوائی نے کہاکہ ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ز اور مقامی پولیس کی مد دسے اتائیوں کے خلاف بھرپور کارروائیاں شروع کردی گئی ہے اور پہلے مرحلے میں سندھ کے چار اضلاع کو منتخب کیا گیا ہے اور ڈائریکٹر انسداد اتائی ڈائریکٹیوریٹ ایاز مصطفی کی سربراہی میں کارروائیاں جاری ہیں ۔ محکمہ صحت سندھ کی طرف سے فراہم کی گئی اتائیوں کی فہرست کے مطابق کارروائی کی جاری ہیں جس میں متعلقہ اضلاع کے ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرز اور پولیس کی مدد حاصل کی گئی ہے۔ منہاج قدائی نے کہاکہ میرپور خاص ، ٹنڈواللہ یار اور بدین میں اتائیوں کے خلاف کارروائی اگلے چند ہفتوں میں متوقع ہے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر