سندھ حکومت خود اپنے بوجھ سے گرے گی ، پکڑ دھکڑ کا سلسلہ ابھی بند نہیں ہوا :فوادچوھری کا حماداظہرکو ترجمان برائے معیشت بنانے کا اعلان

سندھ حکومت خود اپنے بوجھ سے گرے گی ، پکڑ دھکڑ کا سلسلہ ابھی بند نہیں ہوا ...
سندھ حکومت خود اپنے بوجھ سے گرے گی ، پکڑ دھکڑ کا سلسلہ ابھی بند نہیں ہوا :فوادچوھری کا حماداظہرکو ترجمان برائے معیشت بنانے کا اعلان

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری نے کہاہے کہ سعودی اماراتی پیکجز کے عوض پاکستان کسی تیسرے ملک کے خلاف استعمال نہیں ہورہا ،افتخار چودھری نے پاکستان کو بہت سے کیسز میں پھنسایا،نیب قوانین میں ترمیم لارہے ہیں،پکڑ دھکڑ کا سلسلہ ابھی بند نہیں ہوا ، سندھ حکومت اپنے بوجھ سے گرے گی ،حماداظہر کو ترجمان برائے معیشت بنانے کا فیصلہ کیاہے ، ترکی نے نواز شریف کے حوالے سے این آر او کی بات نہیں کی ۔

جیونیوز کے پروگرام ”جرگہ“ میں گفتگو کرتے ہوئے فواد چودھری نے کہا کہ نواز شریف کے حوالے سے ترکی کی جانب سے این آر او کی بات نہیں کی گئی اور نہ ہی ہم نے ایسا کوئی بیان دیا ،ترکی سے مدد لینے کے حوالے سے سوال پر فواد چودھری نے کہا کہ ترکی سے ہمارے انتہائی قریبی سٹریٹیجک تعلقات ہیں، نواز شریف کے دور میں بھی ہمارے ترکی سے بہت قریبی تعلقات رہے ہیں، اگلی ملاقات میں پاکستان اور ترکی ایک بہت بڑا تجارتی معاہدہ کرنے جارہے ہیں،ترکی کی جانب سے ماضی میں بڑا احتجاج رہاہے ،افتخار چودھری نے ہمیں بہت سے کیسز میں پھنسایا ہے ،ابھی آگے ریکوڈک کا معاملہ بھی چل رہاہے ۔انہوں نے کہا کہ پی سی بی نے انڈیا کی کرکٹ ایسوسی ایشن پر کیس کردیا اوروہاں بھی ہمیں 15ملین جرمانہ ہوا ہے، بیرون ملک پیسے واپس لانے کے حوالے سے جو عمل چل رہاہے ، ہوسکتاہے کہ ہم باہر سے ایک پیسہ بھی نہ لا سکیں اور ہوسکتا ہے لے بھی آئیں لیکن ایک عمل چل رہاہے کیونکہ ہم عوام سے احتساب کاوعدہ کرکے آئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ نیب قوانین میں کمی ہے ،اس حوالے سے ہماری ، پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن کی ملاقاتیں ہوئی ہیں اورہم نیب قانون پر ترمیم لانے جارہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کے دورمیں سعودی عرب کے ساتھ ہماری فوج کے تعلقات تو تھے لیکن ہماری سیاسی حکومت کے تعلقات نہیں تھے لیکن تحریک انصاف کی پالیسی مختلف ہے ، ہم چاہتے ہیں کہ ہم مسلم امہ کے اہم ممالک میں سے ہیں اور ہم نے مسلم امہ کے ممالک میں تلخیوں کو کم کرنے کیلئے کردار ادا کرناہے ۔ ان کاکہناتھا کہ سعودی عرب اور یو اے ای کی جانب سے امدادی پیکجز کے عوض پاکستان کسی تیسرے ملک کے خلاف استعمال نہیں ہورہا ، ہم چاہتے ہیں کہ سعودی عرب اور ایران میں تلخیاں کم ہوں کیونکہ اگر ہم پارٹنر بن جائیں تو پھر ہم مسلم ممالک کے درمیان تلخیاں کم کرنے کیلئے کردار ادا نہیں کرسکتے ۔

ان کا کہناتھا کہ جو پیسے ہمیں دیئے جارہے ہیں ، یہ پیسے ہم نے واپس بھی کرنے ہیں، ان کو سود بھی ملنا ہے ، یہ نہیں کہ ہم نے یہ پیسے واپس نہیں کرنے ، سرکاری طور پرمیری اورافتخاردرانی کی حیثیت سرکاری ترجمان کی ہے ، فرخ نسیم کابینہ کے کسی اجلاس میں نہیں بیٹھے ، ان کو ترجمان مقرر کرنے کافیصلہ کیا تھا لیکن بعد میں وزیراعظم ہاﺅس نے پابندی لگا دی ، فواد چودھر ی نے بتایا کہ حماداظہر کو وزیر اعظم کا ترجمان برائے معیشت بنانے کا فیصلہ کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت خوداپنے بوجھ سے گرے گی ، پکڑ دھکڑ کاسلسلہ ابھی جاری ہے ،بند نہیں ہوا ، وزیراعظم نے اعظم سواتی کا استعفیٰ منظور کرلیا ہے ۔

مزید : اہم خبریں /قومی