بجلی گیس اور پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ روکا جائے

بجلی گیس اور پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ روکا جائے

  



لاہور(یواین پی)پاکستان انڈسٹریل اینڈ ٹریڈرز ایسو سی ایشنز فرنٹ(پیاف)کے چیئرمین میاں نعمان کبیر نے کہا ہے کہ گزشستہ سال حکومت کے سخت اقتصادی اقدامات سے عوام اورکاروباری سرگرمیاں کافی متاثر ہوئی ہیں  جن کی بحالی کے لئے موئثر پلاننگ کی ضرورت ہے۔ بجلی گیس اور تیل کی قیمتوں میں مسلسل اضافے کو روکنا ازحد ضروری ہے کیونکہ اس سے عوام کی زندگی اور صنعت و تجارت جاری رکھنا مشکل ہوتا جا رہا ہے۔ گیس اور بجلی کی قیمتوں میں تمام اضافے واپس لئے جایئں کیوں کہ مہنگی بجلی اور گیس اور پٹرولیم مصنوعات کے باعث پاکستان اپنے ہمسایہ ممالک  کے ساتھ مقابلے کی دوڑ سے باہر ہوتا جا رہا ہے۔ درآمدی فہرست کم اور برآمدی فہرست میں اضافہ سے تجارتی خسارہ کم تو ضرور ہوا ہے مگر انرجی کی قیمتوں میں اضافہ سے برآمدات بڑھانے کا حکومتی ویژن شدید متاثر ہو گا۔ لاگت میں اضافے کے باعث بیرونی منڈیوں میں پاکستانی مصنوعات مہنگی ہو جاتی ہیں جو برآمدات میں کمی کا باعث نتی ہیں۔ چیئرمین پیاف میاں نعمان کبیرنے سیئنر وائس چیئرمین ناصر حمید خان اور وائس چیئرمین جاوید اقبال صدیقی کے ہمراہ آج ایک پریس ریلیز جاری کرتے ہوئے کہا کہ حکومت تجارتی پالیسی کے اہداف پورے کرنے کے لئے سازگار ماحول فراہم کریانہوں نے کہا کہ سیاسی کشمکش مہنگائی اور پے درپے بحرانوں نے ملکی معیشت کا گھوڑا مریل بنا دیا ہے  اب اس میں امید کی روح پھونکنا ضروری ہو گیا ہے اسکے لئے تمام طبقات کا اعتماد بحال کرنا ہو گا تاکہ پاکستان مستحکم معیشت کی حامل ایک فلاحی ریاست بن سکے۔ میاں نعمان کبیر نے کہا ملک میں توانائی کی قیمتوں کو منجمد کرنے سے متعلق مسائل حل کرنے کیلئے ایک بہتر روڈ میپ کی ضرورت ہے جس سے صنعتی شعبہ میں روانی اور پیداواری اہداف کی تکمیل ممکن ہو گی۔  

چیئرمین نے کہا کہ معاشی استحکام کے لئے ازحد ضروری ہے کہ بجلی گیس اور پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں کو خطے کے دوسرے ممالک کے لیول سے کم رکھا جائے۔ مہنگی بجلی اور گیس اور پٹرولیم مصنوعات کے باعث پاکستان اپنے ہمسایہ ممالک کے ساتھ مقابلے کی دوڑ سے باہر ہوتا جا رہا ہے۔ پیداواری لاگت میں اضافے کے باعث بیرونی منڈیوں میں پاکستانی مصنوعات مہنگی ہو جاتی ہیں جو برآمدات میں کمی کا باعث بنتی ہیں۔ 

مزید : کامرس


loading...