تعلقات کا شبہ،4افراد کا نوجوان پر وحشیانہ تشدد،ناک کاٹ کر فرار

تعلقات کا شبہ،4افراد کا نوجوان پر وحشیانہ تشدد،ناک کاٹ کر فرار

  



رحیم یار خان (نمائندہ پاکستان)بیٹی سے تعلقات کے شبہ پر رفع حاجت کے لئے گھر کے پاس سے گزرنے والے 19سالہ نوجوان کو ملزم نے3ساتھیوں کی مدد سے قابوکرکے تیز دھار چھری سے ناک کاٹ دی اور تشدد کانشانہ بناتے رہے‘ اہل علاقہ کو آتا دیکھ کر موقع سے فرار ہوگئے‘ زخمی کو طبی امداد کیلئے ہسپتال منتقل کردیا۔ پولیس نے مقدمہ درج کرکے ایک ملزم گرفتارکرلیا۔ ملزم‘ تفصیل کے مطابق تھانہ رکن پورکی حدود تاج پور پیر والا کے(بقیہ نمبر20صفحہ12پر) رہائشی19سالہ نوجوان محمدعامر نے پولیس کواپنی شکایت میں بیان کیا کہ وہ گزشتہ سے پیوشتہ شب رفع حاجت کیلئے جارہاتھا کہ اسی دوران پانچ ملزمان محمد جمال‘ محمدیعقوب‘ محمدلقمان اور محمدسلمان نے اسے دبوچ لیا اور قابو کرکے تیز دھارچھری سے اس کی ناک کاٹ دی اور ڈنڈوں اور سوٹیوں سے تشدد کانشانہ بناتے رہے‘ شور واویلا پر اہل علاقہ کوآتا دیکھ کر ملزمان چھری لہراتے ہوئے موقع سے فرار ہوگئے۔ ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر منتظر مہدی نے فوری نوٹس لیتے ہوئے ملزمان کی گرفتاری کے احکامات جاری کردئیے‘ زخمی محمدعامر کو طبی امداد کیلئے رورل ہیلتھ سینٹرمیانوالی قریشیاں منتقل کردیا۔ زخمی محمدعامر کی رپورٹ پر پولیس نے مقدمہ درج کرکے ایک ملزم محمدجمال کو گرفتارکرکے تھانہ منتقل کردیا جبکہ دیگر ملزمان کی گرفتاری کیلئے پولیس چھاپے مارنے میں مصروف ہے۔ گرفتارملزم محمدجمال نے بتایا کہ نوجوان محمد عامر نے اس کی جوان سالہ بیٹی فضیلہ سے تعلقات استوار کئے ہوئے تھے اور وہ اسے ملنے کیلئے رات 12بجے گھر آیا ہوا تھا جسے رنگے ہاتھوں پکڑا تھا۔ 

تشدد 

مزید : ملتان صفحہ آخر