تیمرگرہ‘ پی ٹی آئی ورکرز ممبران اسمبلی پر برس پڑے

تیمرگرہ‘ پی ٹی آئی ورکرز ممبران اسمبلی پر برس پڑے

  



تیمرگرہ (بیورورپورٹ) لوئیر دیر پی ٹی ائی دیر لوئر  میں اختلافات کھل کر سامنے اگئے،ناراض گروپ کا قیام اور ورکرز کنونشن کا انعقادپارٹی ورکرز ممبران اسمبلی پر پھٹ پڑے، ممبران اسمبلی  قبلہ درست اور پارٹی کارکنان کا استحصال بندکرکے میرٹ پر تقرریاں کرئے بصورت دیگر احتجاجی تحریک جاری رکھنے اورچھ نکاتی ایجنڈے کا اعلان،تفصیلات کے مطابق پی ٹی ائی دیر لوئرمیں اختلافات کھل کرسامنے اگئے پارٹی کے بانی اراکین اور ناراض کارکنان نے ریسٹ ہاؤس تیمرگرہ میں ورکرز کنونشن کا انعقاد کیا جس میں بڑی تعداد میں پارٹی ورکرز شریک رہے کنونشن سے پارٹی کے سابقہ ڈویژنل جنرل سیکرٹری علی شاہ مشوانی،سابقہ امیدوار صوبائی اسمبلی ملک انعام،ڈویژنل فنانس سیکرٹری خان شیرین ایڈوکیٹ،،توصیف خان،غنچہ گل،حیات اللہ،ڈاکٹر عبید اللہ،زاہد خان اور اورسیز کے صدر محمد علی ودیگر نے خطاب کرتے ہوئے دیر لوئر سے پارٹی کے منتخب ممبران اسمبلی کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ممبران اسمبلی بندر بانٹ کے ذریعے ریوڑیاں اپنوں میں بانٹ رہے ہے جبکہ حقیقی وکررز کو نظرانداز کیا جارہا ہے انھوں نے الزام لگایا کہ محکمہ صحت میں بندر بانٹ کے ذریعے آسامیوں کو تقسیم کیا گیا جبکہ پی پی پی سے تعلق رکھنے والے شخص کو ڈسٹرکٹ سپورٹس افیسر جبکہ ایم پی اے کے قریبی شخص کو ضلعی زکواۃ افیسر مقرر کیا گیا جو دیرینہ ورکرز کے ساتھ سوتیلی ماں جیسے سلوک کے مترادف ہے مقررین نے کہا کہ ایم پی ایز دیر کے مفادات پر سمجھوتے سے باز رہے اور ضلع سے مسلسل باہر منتقل کئے جانے والے منصوبوں کے روک تھام کرئے یا استعفیٰ دیکر گھر بیٹھ جائے انھوں نے کہا کہ عمران خان نے 22سال میں نظریاتی وکررز بنائے اور ممبران اسمبلی نے دو سال میں سارے ورکرز کو پارٹی سے دور دھکیل کر پارٹی سے غداری کی انھوں نے کہا کہ ممبران اسمبلی اپنا قبلہ درست کرئے ورنہ احتجاجی تحریک کا سلسلہ دراز کرکے ورکرز کا حق چھین کر لیں گے انھوں نے پارٹی کے اعلیٰ قیادت اور ممبران اسمبلی سے مطالبہ کیا کہ زکواۃ چیئرمین سے فوری استعفیٰ لیا جائے جبکہ پارٹی کے پارلیمانی اور تنظیمی عہدوں کو الگ کیا جائے انھوں نے یہ بھی مطالبہ کیا کہ ورکرز کی داد رسی اور ڈی میرٹ کی تحقیقات کے لئے آزادانہ کمیشن بنایا  جائے ورنہ کابینہ تشکیل دیکر نہ ختم ہونے والا احتجاجی تحریک شروع کرینگے

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...