پانی کی فراہمی،نظام کو سولر سسٹم پر منتقل کرنے پر غور کیا جا رہا ہے:ناصر حسین شاہ

پانی کی فراہمی،نظام کو سولر سسٹم پر منتقل کرنے پر غور کیا جا رہا ہے:ناصر حسین ...

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر) وزیر بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ کراچی کو حب ڈیم سے 100 ایم جی ڈی پانی کی مکمل فراہمی کو یقینی بنانے کیلئے سپلائی سسٹم کو بشمول تمام کمپوننٹ پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ یونٹ کے تحت جدید طرز پر از سو نو بہتر بنایا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے اپنے دتر میں پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ یونٹ کے متعلقہ افسران کے ساتھ پانی کی فراہمی کے مختلف منصوبوں کے حوالے سے منعقدہ ایک اجلاس کی صدارت کے موقع پر کیا۔ اجلاس میں سیکریٹری بلدیات روشن علی شیخ،منیجنگ ڈائریکٹر واٹر بورڈ اسداللہ خان، چیف انجینئر واٹر بورد ظفر پلیجو، سپرنٹنڈنٹ انجینئر سکندر علی، ڈی جی پی پی پی یونٹ خالد شیخ، اور سہیل عابد بھی شریک تھے۔ وزیر بلدیات نے اس موقع پر ایک ٹیکنیکل کمیٹی قائم کرنے کی ہدایت کی جسکے سربراہ ایم ڈی واٹر بورڈ ہونگے جبکہ واٹر بورڈ کے دیگر افسران اور پی پی پی یونٹ کے دو ممبران بھی ٹیکنیکل کمیٹی میں شامل ہونگے۔ کمیٹی تمام امور کا جائزہ لینے کے بعد اپنی حتمی سفارشات وزیر بلدیات کو پیش کریگی۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ حب ڈیم سے حب کینال کے ذریعے کراچی کو 100 ملین گیلن پانی فراہم کیا جاتا ہے مگر حب کینال سمیت پورا سسٹم ٹوٹ پھوٹ کا شکار اور بوسیدہ ہوچکا ہے جس کے باعث کراچی تک پانی پہنچتے پہنچتے 50 فیصد پانی ضایع ہوجاتا ہے اور اس طرح 100 کے بجائے صرف 50 ایم جی ڈی پانی کراچی پہنچ پاتا ہے جسکے نتیجے میں اس سسٹم سے مستفید ہونے والے علاقوں کو قلتِ آب کا سامنہ ہے لہذہ ضروری ہے کہ اس پورے سسٹم کے ڈھانچے کو از سر نو بہتر بنایا جائے۔ اجلاس میں کراچی کو پانی کی مسلسل فراہمی کیلئے واٹر بورڈ کے پورے سسٹم کو سولر سسٹم پر منتقل کرنے کی تجویز پر بھی غور کیا گیا اور مختلف پہلوں سے اس کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں پانی کے نئے منصوبوں کے حوالے سے بھی غور کیا گیا جبکہ پانی کے متبادل ذرائع اور پانی کو صاف کرنے کے سلسلے میں مختلف پلانٹس لگانے کے حوالے سے بھی بات چیت کی گئی۔

مزید : صفحہ اول


loading...