گورنری کرنا کوئی آسان کام نہیں.... نہیں یقین تو لیونڈ کو دیکھو

گورنری کرنا کوئی آسان کام نہیں.... نہیں یقین تو لیونڈ کو دیکھو
گورنری کرنا کوئی آسان کام نہیں.... نہیں یقین تو لیونڈ کو دیکھو

  

کیف (مانیٹرنگ ڈیسک) یوکرائم میں گورنر بننا آسان ہوگا، گورنری کرنا آسان نہیں۔ نااہلی دکھانے پر یوکرین میں ایک گورنر کو شہریوں نے پہلے پیٹا، پھر کپڑے پھاڑے اور پھر دوڑیں لگوادیں۔ جمہوریت میں طاقت کا سرچشمہ عوام ہوتے ہیں۔ یہی عوام جب طاقت کا مظاہرہ کر ڈالیں تو سرکار کا سر الگ اور کار الگ ہوجاتی ہے۔ ایسا ہی کچھ ہوا یوکرائن کے شہر خیمیلسنٹسکی کے گورنر کے ساتھ جو سرکاری عمارت میں سرکاری پروٹوکول کے ساتھ عوام سے مخاطب تھا کہ انہوں نے جو کچھ کیا درست کیا۔ مگر ان کے حلقے کے عوام ہلکے نہیں تھے۔ پہلے گورنر صاحب کی سختی سے مخالفت کی اور جب انہوں نے اپنی غلطی کا اعتراف نہ کیا تو پھرکسی نے پینٹ سے پکڑا تو کسی نے گھونسوں سے تواضع کی۔ نوچ کھسوٹ کر گورنر صاحب کے کپڑے تک پھاڑ ڈالے۔ بڑی مشکلوں کے بعد جب گورنر لیونڈ پروس کھڑکی سے کود کر جان بچاکر بھاگنے لگے تو شہریوں نے انہیں باہر پکڑ لیا اور خوب زدوکوب کیا۔ شہریوں کا مطالبہ تھا کہ وہ اپنے عہدے سے مستعفی ہوجائیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -