امریکی کمپنی ایران میں کوڑے سے بجلی بنائے گی

امریکی کمپنی ایران میں کوڑے سے بجلی بنائے گی
امریکی کمپنی ایران میں کوڑے سے بجلی بنائے گی

  

تہران (نیوز ڈیسک) ایک عرصے تک امریکی پابندیوں کا نشانہ بننے کے بعد اب ایران اور امریکہ کے تعلقات میں واضح بہتری دیکھی جاسکتی ہے۔ دونوں ممالک نے مشرق وسطیٰ میں شدت پسند تنظیم داعش (ISIS) کی کامیابیوں کے بعد امن کے لئے مل کر کام کرنے کا عندیہ بھی دیا ہے۔ اب تازہ اطلاعات کے مطابق ”ورلڈ ایکو انرجی“ نامی امریکی کمپنی نے ایران میں 1.175 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کا ابتدائی معاہدہ کیا ہے۔ معاہدے کے تحت ایران بھی مشترکہ منصوبے میں اتنی ہی رقم کی سرمایہ کاری کرے گا۔ اس منصوبے کے تحت ”کوڑے“ کو استعمال کرتے ہوئے بجلی پیدا کی جائے گی۔ اس کے علاوہ آلودہ پانی کو بھی استعمال کیا جائے گا۔ اس پراجیکٹ کے ذریعے روزانہ 250 میگا واٹ بجلی بنائی جائے گی۔ یہ پلانٹ جنوبی مغربی صوبے چہارمحل، بختیاری میں لگایا جائے گا اور اس سے 600-700 روزگارکے مواقع پیدا ہونے کی توقع ہے۔ اس کا آغاز ستمبر میں ہوگا۔ توقع ہے کہ ایٹمی پروگرام کے حوالے سے ایران اور بین الاقوامی طاقتوں کے درمیان جلد ہی معاہدہ طے پاجائے گا۔ اس کے بعد مزید بین الاقوامی کمپنیوں کی جانب سے ملک میں سرمایہ کاری متوقع ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -