چین اور سلووینیا اقتصادی تعاون میں اضافے کے لئے رضامند

چین اور سلووینیا اقتصادی تعاون میں اضافے کے لئے رضامند

سلووینیا(آئی این پی)سلووینیا اپنی زرعی پیداوار چینی منڈیوں تک پہنچانے میں خصوصی دلچسپی رکھتا ہے کیونکہ چینی مارکیٹ حال ہی میں تمام ممالک کے لئے کشش رکھتی ہے اور حکومت بھی زرعی پیداور کی چینی منڈیوں تک رسائی کے لئے زیادہ سہولتیں فراہم کر رہی ہے ۔ یہ بات سلووینیا کے نائب وزیراعظم ڈیجان زیدان نے چین کے نائب وزیر زراعت چن ژیاہواسے بات چیت کرتے ہوئے کہی ۔ چینی نائب وزیر زراعت آج کل سلووینیا کے سرکاری دورے پر ہیں ۔ سلووینیا کے نائب وزیراعظم نے کہا کہ وہ چین کو مچھلی ، پولٹری ، شہد اور دیگر جانور برآمد کر سکتے ہیں جبکہ چین نائب وزیرزراعت نے کہ وہ دیگر زرعی پیداوار سلووینیا کو برآمد کرنے میں دلچسپی رکھتے ہیں ۔ گزشتہ ماہ چین کا دورہ کرنے والے اعلیٰ چینی حکام نے سلووینیا کی پولٹری اور ڈیری سے متعلق مصنوعات کو چین برآمد کرنے کے لئے منظور کر لیا تھا ۔چینی نائب وزیرسے بات چیت کرتے ہوئے سلووینیا کے نائب وزیراعظم زیدان نے کہا کہ وہ چین اور سلووینیا کے درمیان تعلقات کو مزید آگے بڑھانا چاہتے ہیں اور وہ اپنی زرعی پیداوار چین کو برآمد کر کے اس سال کی ایک کامیاب کوشش ثابت کرنا چاہتے ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ اس سال کے پہلے تین مہینوں میں ایک ملین سے زائد کی اشیاء برآمد کی گئیں جبکہ 2015میں صرف6ہزار یورو کی اشیاء برآمد کی گئی تھیں ۔ چینی نائب وزیر زراعت نے کہا کہ چین اور سلووینیا کے درمیان تعلقات کامیابی سے آگے بڑھ رہے ہیں لیکن اب ہمیں مستقبل میں انہیں مزید مستحکم کرنے کے لئے کوششیں جاری رکھنی چاہیے ۔

مزید : کامرس