سائنسدانوں کافضا میں پلازمہ اور ہائیڈروجن مالیکیولز ایکسپوز کرنے کا تجربہ کامیاب

سائنسدانوں کافضا میں پلازمہ اور ہائیڈروجن مالیکیولز ایکسپوز کرنے کا تجربہ ...

لاہور(خبرنگار) پاکستانی سائنسدانوں نے سطح زمین سے چار ہزار فٹ کی بلندی پر جا کر اپلائیڈ سائنسز کی تاریخ میں پہلی مرتبہ گیارہ ہزار سات سو گازکے تحت پلازمہ اور ہائیڈروجن مالیکیولز ایکسپوز کرنے کا پہلی مرتبہ کامیاب تجربہ کر لیا ۔ یہ تجربہ یو این کاختہ پوسٹ ڈاکٹورل ڈی آر آر ملٹی ورسٹی ، سنٹر فار انٹی گریٹڈ ماؤنٹین ریسرچ پنجاب یونیورسٹی کے زیر اہتمام پروفیسر ڈاکٹر قاضی ارونگزیب الحافی کی زیر نگرانی عمل میں لایا گیا جنہوں نے لاہور کے مقامی ائیر پورٹ سے فلائی کیا اور سطح زمین سے چار ہزار فٹ کی بلندی پر جا کر مقناطیسی شعاوں کی موجودگی میں حاملہ مادہ خرگوش پر ہائیڈروجن مالیکیولر کا حیاتیاتی تجزبہ کیا ۔اس ٹیم میں کامسیٹس سے پروفیسر ڈاکٹر زکی، سائنس انٹرنیشنل سے ڈاکٹر اعظم شیخ، ڈاکٹر شاہین خان اور مختلف اداروں سے محققین شامل ہیں۔ اس تجزبہ کو نیشنل پوسٹ ڈاکٹورل سائنٹیفک اتھارٹی یو ایس اے ، ناسا اور کیمبرج یونیورسٹی نے براہ راست مانیٹر کیا۔اس تجربہ کے ذریعہ دوران حمل یا پیدائش کے بعد ہونے والی معذوری کی روک تھام کرنے میں بھی مدد مل سکے گی ۔اس تحقیق سے فضا میں بلڈ پریشیر، شوگر ،حرکی اعصاب ، حسی اعصاب کو کنٹرول کرنے میں بھی مدد ملے گی۔ اس کے علاوہ پاکستانی سائنسدانوں کا یہ تجربہ فزکس، کیمسٹری ، سپیس سائنسز ، بائیولوجی ، الیکٹرونکس اورانوائرنمنٹل سائنسز میں تحقیق کے نئے پہلوؤں کو جنم دے گا۔

مزید : صفحہ آخر