پاکستان میں ہومیوپیتھک سسٹم اف میڈیسن کا نظام تعلیم بہتر کرنے کی ضروت ہے‘ڈاکٹر محمد زبیر قریشی

پاکستان میں ہومیوپیتھک سسٹم اف میڈیسن کا نظام تعلیم بہتر کرنے کی ضروت ...

  

لاہور(پ ر)ہومیوپیتھی ایک بین الااقوامی سسٹم اف میڈیسن ہے جو امریکہ اور یورپ سمیت دنیا کے کئی ترقی یافتہ اور ترقی پزیر ممالک میں رائج ہے۔ پاکستان میں 1965 میں ایک پارلیمانی ایکٹ کے تحت اس معالجاتی طریقہ کو قانونی اور ا?ئنی تحفظ دیا گیا۔حکومتی سرپرستی نہ ہونے کے باوجود ہومیوپیتھی طریقہ علاج عوام الناس میں بہت مقبول ہے اور سستا اور پر اثر طریقہ علاج ہونے کی بدولت مریضوں کی ایک بڑی اکثریت اس سے استفادہ اٹھاتی ہے۔ ان خیالات کا اظہار سوسائٹی آف ہومیوپیتھس۔پاکستان کے صدر ڈاکٹر محمد زبیر قریشی نے پاکستان ہومیوپیتھک میڈیکل کالج میں سوسائٹی آف پاکستان کے تحت ہونے والے ڈاکٹرز ٹریننگ فورم کے سیشن میں خطاب کرتے ہوے کیا۔ انہوں نے کہا کہ فی الوقت ہومیوپیتھی کا معیار تعلیم بہتر کرنے کی بہت ضرورت ہے اور پاکستان ہومیوپیتھک میڈیکل کالج جیسے مزید ادارے بھی قائم ہونے چاہیے جہاں طلبہ و طالبات کو معیاری تعلیم مہیا ہو سکے۔

مزید :

کامرس -