فواد حسن فواد کی گرفتاری خو شآئندہ ،نیب کا سیاستدانوں کے حوالے سے دہرا معیار کیوں؟ٹھریک انصاف

فواد حسن فواد کی گرفتاری خو شآئندہ ،نیب کا سیاستدانوں کے حوالے سے دہرا معیار ...

  

اسلام آباد (آئی این پی)پاکستان تحریک انصاف کے رہنما نعیم الحق نے کہا ہے کہ فواد حسن فواد کی نیب کی جانب سے گرفتاری خوش آئند ہے، فواد حسن فواد نے نواز شریف اور خاقان عباسی کی ہر غلط کام کرنے میں معاونت کی، قوم کو معلوم ہونا چاہیے کہ ملک کے وزیراعظم کے پرنسپل سیکرٹری کن کن کاموں میں ملوث رہے ہیں۔ جمعرات کو نیب کی فواد حسن فواد کی گرفتاری کے معاملے پر نعیم الحق نے رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ فواد حسن فواد کی گرفتاری بہت پہلے ہی عمل میں آجانی چاہیے تھی، فواد حسن فواد نے نواز شریف اور خاقان عباسی کی ہر غلط کام کرنے میں معاونت کی، فواد حسن فواد مختلف کاموں میں براہ راست ملوث رہ چکے تھے، قوم کو معلوم ہونا چاہیے کہ دونوں وزرائے اعظم کے پرنسپل سیکرٹری کن کن کاموں میں ملوث رہے ہیں، فواد حسن فواد نے کہاں کہاں نواز شریف اور شاہد خاقان عباسی کو اختیارات سے تجاوز کرنے کی تجویز دی ہے ان تمام واقعات سے بھی آگاہی ملنی چاہیے، میں اس گرفتاری کو خوش آئند سمجھتا ہوں، اس سے مزید حقائق سامنے آئیں گے، مجھے خوشی ہے کہ نیب نے محاسبہ کیلئے درست اقدام کیا ہے۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فواد چودھری نے مزید کہا پاکستان تحریک انصاف نے الیکشن تک کرپشن کے الزام میں سیاستدانوں کی گرفتاری روکنے کے نیب کے فیصلے کو مسترد کر تے ہوئے کہا ہے کہ نیب کو سیاستدانوں کے حوالے سے دہرا معیار نہیں اپنانا چاہیے، کرپشن میں ملوث افتخار چوہدری اور اشفاق پرویز کیانی کے بھائی کو گرفتار کیا جانا چاہیے، قانون امیر اور غریب سب کے لیے برابر ہونا چاہیے، نواز شریف چاہتے ہیں کہ ان کے فیصلے کو التوا میں ڈالا جائے ۔لاہور ہائیکورٹ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ترجمان تحریک انصاف فواد چوہدری نے کہاکہ الیکشن تک سیاستدانوں کی گرفتاریاں روکنے کے نیب کے فیصلے کی مذمت کرتے ہیں، نیب کو سیاستدانوں کے حوالے سے دہرا معیار نہیں اپنانا چاہیے۔فواد چوہدری نے مطالبہ کیا کہ کرپشن میں ملوث افتخار چوہدری اور اشفاق پرویز کیانی کے بھائی کو گرفتار کیا جانا چاہیے، انہوں نے سوال کیا کہ کیا نیب صرف سیاستدانوں کے خلاف کارروائیوں کے لیے بنا ہے؟ترجمان تحریک انصاف نے کہا کہ احتساب عدالت کو ایون فیلڈ ریفرنس کا فیصلہ موخر نہیں کرنا چاہیے، یہ نہیں ہو سکتا کہ نظام انصاف ایک شخص کیلئے انتظار کرتا رہا۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -