ایون فیلڈ ریفرنس، فیصلہ نہیں ڈسکشن جاری تھی، فیصلے کے وقت میڈیا نمائندوں کو بلایا جائے گا: عدالتی عملہ

ایون فیلڈ ریفرنس، فیصلہ نہیں ڈسکشن جاری تھی، فیصلے کے وقت میڈیا نمائندوں کو ...
ایون فیلڈ ریفرنس، فیصلہ نہیں ڈسکشن جاری تھی، فیصلے کے وقت میڈیا نمائندوں کو بلایا جائے گا: عدالتی عملہ

  

اسلام آباد  (ڈیلی پاکستان آن لائن) احتساب عدالت نے آج ایون فیلڈ ریفرنس کیس کا فیصلہ سنانا تھا لیکن پانچویں مرتبہ بھی فیصلہ موخر کردیاگیا اور میڈیا کے نمائندوں کو کمرہ عدالت سے باہر نکالا گیاتو صحافیوں نے ناراضی کا اظہار کیا لیکن اب عدالتی عملے نے انہیں خوشخبری سنادی ۔

مقامی میڈیا کے مطابق عدالتی عملے نے بتایا کہ دراصل فاضل جج اور وکلاء کو مشاورت کرنا تھی جس کے لیے صحافیوں کو باہر نکالاگیا، دراصل فیصلہ نہیں سنایا جارہا تھا بلکہ وکلاء اور جج آپس میں مشاورت کررہے تھے ، مشاورتی عمل مکمل ہوتے ہی صحافیوں سمیت سب لوگوں کو کمرہ عدالت میں بلا لیا جائے گا ۔

یادرہے کہ کمرہ عدالت میڈیا نمائندوں سے کھچا کھچ بھرا ہوا تھا اور فاضل جج کے عدالت پہنچنے پر  نمائندوں کو باہر نکالا دیا گیا تھاجس کے بعد یہ بھی بعض چینلز نے کہا کہ فیصلہ سنانا شروع کردیا گیا ہے تاہم بعدازاں معلوم ہوا کہ فیصلہ تاحال سنانا شروع نہیں کیاگیا۔ 

مزید :

قومی -