تاریخ میں پہلی مرتبہ کاکروچ کو سزائے موت دے دی گئی کیونکہ۔۔۔

تاریخ میں پہلی مرتبہ کاکروچ کو سزائے موت دے دی گئی کیونکہ۔۔۔
تاریخ میں پہلی مرتبہ کاکروچ کو سزائے موت دے دی گئی کیونکہ۔۔۔

  

منیلا(مانیٹرنگ ڈیسک)کاکروچ سبھی کو سخت ناپسند ہیں اور گھر میں نظر آ جائے تو اس کی موت یقینی ہوتی ہے لیکن گزشتہ روز فلپائن میں ایک کاکروچ کو سزائے موت دے دی گئی ہے۔ یہ ایسا حیران کن واقعہ ہے کہ آپ نے اس سے پہلے کبھی نہ دیکھا ہو گا۔ میل آن لائن کے مطابق اس کاکروچ کو سزائے موت باقاعدہ الیکٹرک چیئر پر بٹھا کر، کرنٹ کے ذریعے دی گئی ہے، جس طرح مغربی ممالک میں قیدیوں کو دی جاتی ہے۔ یہ کام کسی عدالت کے حکم پر نہیں بلکہ گیبرئیل توازون نامی شخص نے اپنے گھر میں یہ انوکھا کام کیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق گیبرئیل کے گھر میں یہ کاکروچ گھس آیااور اس ’جرم‘ پر گیبرئیل نے اسے سزائے موت دینے کا فیصلہ کر لیا۔ اس نے خاص طور پر ایک چھوٹی سی الیکٹرک چیئر بنائی۔ اس کو ایک بیٹری سے کرنٹ دیا اور ساتھ ایک بلب لگایا۔ پھر اس نے پکڑے ہوئے کاکروچ کو اس کرسی پر باندھا۔ پہلے لکڑی کی سلائی سے اس کے ساتھ کچھ چھیڑچھاڑ کی اور پھر بٹن آن کر دیا جس سے بلب نے چند جھٹکے لیے اور کاکروچ کی کرنٹ لگنے سے موت واقع ہو گئی۔

گیبرئیل نے اپنی اس حرکت کی ویڈیو بنا کر انٹرنیٹ پر پوسٹ کی ہے جہاں صارفین اس کے اس عمل کو ظلم قرار دے کر اس پر شدید تنقید کر رہے ہیں۔کرسٹینا نامی لڑکی نے ویڈیو پر کمنٹس میں لکھا ہے کہ ’’ک*** کا بچہ، بیچارے کو کس بے دردی سے مارڈالا۔‘‘مینوئیل میلنگو نامی شخص نے لکھا ہے کہ ’’کوئی اس طرح کے ظالمانہ اقدام کا سوچ بھی کیسے سکتا ہے۔ہر زندہ چیز احساسات رکھتی ہے۔ یہ جانوروں پر ظلم کے مترادف ہے اور اس کی قطعاً اجازت نہیں ہونی چاہیے۔‘‘

مزید :

ڈیلی بائیٹس -