وزیر اعظم کے معاون خصوصی افتخار درانی نے مریم نواز کی پریس کانفرنس کے بعد ایسی امید کا اظہار کر دیا کہ مسلم لیگ ن کے کارکنوں میں شدید پریشانی پھیل جائے گی

وزیر اعظم کے معاون خصوصی افتخار درانی نے مریم نواز کی پریس کانفرنس کے بعد ...
وزیر اعظم کے معاون خصوصی افتخار درانی نے مریم نواز کی پریس کانفرنس کے بعد ایسی امید کا اظہار کر دیا کہ مسلم لیگ ن کے کارکنوں میں شدید پریشانی پھیل جائے گی

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر اعظم کے معاون خصوصی افتخار درانی نے کہا ہے کہ نقل مارنے کے لئے بھی عقل کی ضرورت ہوتی ہے،عدالتیں مریم نواز کی پریس کانفرنس کا نوٹس لیں ،امید ہے کہ اب ضمانت بھی باقی نہیں بچے گی۔تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم عمران خان کے معاون خصوصی افتخار درانی نے مسلم لیگ ن کی رہنما مریم نواز شریف کی پریس کانفرنس پر ردِعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہنقل مارنے کے لئے بھی عقل کی ضرورت ہوتی ہے،جب جب محترمہ نے نقل ماری ہے تب ،تب پکڑی گئی ہیں ،رہی بات سیاست کی تو وہ جنرل جیلانی سے چھانگا مانگا میں ضمیروں کی خرید و فروخت تک ہر پہلو  عوام کے سامنے برہنہ ہے،جسے قوم نے کوڑے دان میں ڈال دیا ہے۔افتخار درانی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہنا تھا کہ عدالتیں مریم نواز کی پریس کانفرنس کا نوٹس لیں ،امید ہے کہ اب ضمانت بھی باقی نہیں بچے گی،وقت آ گیا ہے کہ جے آئی ٹی کا والیم ٹین بھی منظر عام پر لایا جائےتاکہ بچی کھچی حق حقیقت بھی سامنے آ جائے ۔یاد رہے کہ مریم نواز نے الزام لگایا کہ نوازشریف کے خلاف فیصلہ دینے والے جج کو بلیک میل کیا گیا۔ مبینہ ویڈیو اور آڈیو ثبوت دکھاتے ہوئے مریم نواز نے کہا کہ سزا دینے والا خود بول اُٹھا ہے کہ نوازشریف کے ساتھ زیادتی اور ناانصافی ہوئی، جج نے خود بتایا کہ انہیں کسی جگہ بُلا کر اُن کی اخلاق سے گری ہوئی ذاتی ویڈیو دکھائی گئی،جج نے کہا کہ بات نہ ماننے کا تو کوئی آپشن ہی نہیں تھا،جج صاحب نے کہا کہ نواز شریف کو سزا سناکر میرا ضمیر ملامت کررہا ہے اور ڈراؤنے خواب آتے ہیں۔مریم نواز نے الزام عائد کیا کہ نواز شریف کو مفروضوں پر مبنی الزامات کی روشنی میں نشانہ بنایا گیا۔اس موقع پر مریم نواز نے احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کی ویڈیو بھی میڈیا کو دکھائی جس نے سیاسی اور صحافتی حلقوں میں ہلچل مچائی ہوئی ہے۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد


loading...