شارٹ فال زیروکے باوجود بجلی کی لوڈشیڈنگ جاری

شارٹ فال زیروکے باوجود بجلی کی لوڈشیڈنگ جاری

  

لاہور،کوئٹہ،کراچی (سٹاف رپورٹرز، نیوزایجنسیاں) شارٹ فال زیرو ہونے کے باوجو دبجلی کی لوڈشیڈنگ پھر بھی جاری، ملک کے چھوٹے بڑے شہروں میں لوڈ شیڈنگ کے با عث عوام پریشان ہے۔ پنجاب میں بھی لوڈشیڈنگ میں اضافہ ہوگیا ہے جبکہ بلوچستان میں شدید گرمی کے باوجود کوئٹہ میں 6 گھنٹے اور دیگر علاقوں میں 12 سے 18 گھنٹے تک لوڈ شیڈنگ کی جا رہی ہے۔ دوسری جانب خیبرپختونخوا میں شہری علاقوں میں 3 اور دیہی علاقوں میں 13 گھنٹوں تک بجلی غائب رہنے لگی۔ شہریوں کا کہنا ہے کہ شارٹ فال نہیں، کوئی تکنیکی خرابی بھی نہیں، کیا اس لوڈشیڈنگ کو روکنے والا بھی کوئی نہیں۔ادھر فردوس شمیم نقوی سمیت پی ٹی آئی رہنماوں نے کے الیکٹرک کی اجارہ داری ختم کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کراچی میں روز دو گھنٹے دھرنا دینے کا اعلان کر دیا۔ پی ٹی آئی رہنما کراچی میں مسلسل لوڈ شیڈنگ کیخلاف میدان میں آگئے، پریس کانفرنس کے دوران فردوس شمیم نقوی اور آفتاب صدیقی نے کہا کہ کراچی میں دبا کراووربلنگ کی جا رہی ہے، عوام لوڈشیڈنگ سے تنگ آچکے، کمپنی کا معاہدہ پبلک کیا جائے۔ فردوس شمیم نقوی نے کہا کہ کے الیکٹرک 600 میگا واٹ سے زیادہ نیشنل گرڈ سے لینے کی سکت نہیں رکھتا،کے الیکٹرک نے دبا کر اووربلنگ کی ہوئی ہے، اس کے معاملات درست نہیں، کراچی کے بجلی کے نظام کیلئے کوئی اورراہیں ڈھونڈنی ہونگی۔ کراچی میں کے الیکٹرک کے مقابلے میں دوسری کمپنی لائی جائے۔ آفتاب صدیقی نے دھرنے کا اعلان کرتے ہوے کہا کہ پی ٹی آئی روزانہ 3 بجے سے 5 بجے کے الیکٹرک کے سامنے دھرنا دیا کرے گی۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ اووربلنگ کا سسٹم ختم کیا جائے اور کے الیکٹرک کامعاہدہ بھی پبلک کیا جائے۔

لوڈشیڈنگ

مزید :

صفحہ اول -