شیر گڑھ‘ عمائدین کی کاوشوں سے دیرینہ دشمن شیر و شکر ہو گئے

  شیر گڑھ‘ عمائدین کی کاوشوں سے دیرینہ دشمن شیر و شکر ہو گئے

  

شیرگڑھ(نامہ نگار)لوند خوڑ میں جرگہ کی کوششوں سے 50سالہ دشمنی دوستی میں بدل گئی فریق اول حاجی نادر خان(مرحوم)حاجی سرفراز،انور شاہین،ظاہر شاہ اور فریق دوم حاجی لطیف اللہ خان (مرحوم)پروفیسر محب اللہ (مرحوم)ضیاء اللہ خان اور ظفراللہ خان کے درمیان گذشتہ پچاس سالوں سے دشمنی چلی آرہی تھی جس سے علاقے کے امن و امان کو خطرہ تھا عوامی جرگہ لوند خوڑ کے چیر مین شوکت محمد خان کی سربراہی میں جرگہ ممبران نے کوششیں شروع کی جو بار اور ثابت ہوئی اور گذشتہ روز صلح کی تقریب میں دونوں فریقین جرگہ کے سامنے بغل گیر ہوکر ایک دوسرے کے ساتھ بھائیوں جیسا رہنے کا عزم کیا صلح کی تقریب سے ایم پی اے جمشید مہمند،سابق ڈی سی سید محمد جاوید،مولانا سمیع الرحمن،حاجی محمد،نامدار علی، فاروق خان،اسد خان اور ناصر خان نے خطاب کیا اور معاشرے میں صلح کی افادیت پر روشنی ڈالی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -