100 سال میں پہلی بار یہ کام کرنے جارہے ہیں،آسٹریلیا نے بھی اعلان کردیا

100 سال میں پہلی بار یہ کام کرنے جارہے ہیں،آسٹریلیا نے بھی اعلان کردیا
100 سال میں پہلی بار یہ کام کرنے جارہے ہیں،آسٹریلیا نے بھی اعلان کردیا

  

سڈنی(ڈیلی پاکستان آن لائن)آسٹریلیا نے میلبورن میں کورونا کے بڑھتے متاثرین کے باعث اپنی دو سب سے زیادہ آبادی والی ریاستوں نیو ساؤتھ ویلز اور وکٹوریا کے درمیان سرحد کو بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

آسٹریلیا کی جانب سے 100 سال میں پہلی مرتبہ ریاستی سرحدیں بند کرنے کا فیصلہ کیاگیاہے۔

 آسٹریلوی ریاست وکٹوریا کے دارالحکومت میں گذشتہ دو ہفتوں کے دوران سینکڑوں متاثرین میں کورونا وائرس کی تصدیق کی گئی ہے۔ اب تک ان دونوں آسٹریلوی ریاستوں کے درمیان سرحد کھلی تھی جبکہ دیگر ریاستوں نے سرحد بندی کر رکھی ہے۔

وکٹوریا کے لیڈر ڈنیئل اینڈریو کا کہنا تھا کہ دونوں ریاستوں کے درمیان سرحد بندی کا آغاز بدھ سے ہو گا۔

ان کا کہنا تھا اس سلسلے میں ان کی وزیر اعظم سکاٹ مورسن اور نیو ساؤتھ ویلز کے رہنما گلائڈز سے بات ہوئی ہے۔ اس سے قبل دونوں رہنماؤں نے کہا تھا کہ سرحد بند کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔

ڈینیئل اینڈریو نے پیر کو رپورٹرز کو بتایا کہ ’ہم سب اس پر رضامند ہیں کہ سب سے بہتر حل سرحد بند کرنا ہی ہے۔‘

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -