وہ ملک جہاں نرمی کے بعد دوبارہ مکمل لاک ڈاون لگادیا گیا

وہ ملک جہاں نرمی کے بعد دوبارہ مکمل لاک ڈاون لگادیا گیا
وہ ملک جہاں نرمی کے بعد دوبارہ مکمل لاک ڈاون لگادیا گیا

  

نورسلطان(ڈیلی پاکستان آن لائن) دنیا بھر میں کورونا وائرس کی دوسری لہر سر اٹھا رہی ہے جس کی وجہ سے عالمی سطح پر کیسز کی رفتار میں تاحال نمایاں کمی نہیں آسکی۔

اس صورتحال کے پیش نظر مختلف ممالک نے ایک بار پر حفاظتی اقدامات کرنا شروع کردیے ہیں۔ ان ممالک میں قازقستان بھی شامل ہے جس نے ملک بھر میں کورونا کے متاثرین میں اضافے کے بعد دوبارہ لاک ڈاؤن نافذ کر دیا ہے۔

بی بی سی کے مطابق ملک بھر میں کھیلوں کی سہولیات، شاپنگ سنٹرز اور دیگر بہت سی کاروباری سرگرمیوں کو کم از کم دو ہفتوں کے لیے بند کر دیا گیا ہے۔

اس سے قبل قازقستان نے مئی کے آخر میں لاک ڈاؤن میں نرمی کرتےہوئے پابندیاں ختم کی تھیں جب ملک میں 9 ہزار سے کم متاثرین کی تصدیق کی گئی تھی۔

تاہم پابندیاں اٹھائے جانے کے بعد سے اب ملک میں کورونا سے متاثرین کی تعداد 47 ہزار تک پہنچ گئی ہے جبکہ 200 افراد وائرس سے ہلاک بھی ہوئے ہیں۔

حالیہ لاک ڈاؤن ملک میں لگائے گئے پہلے لاک ڈاؤن کی طرح زیادہ سخت نہیں ہے اور شہریوں کو اندرون و بیرون ملک سفر کرنے کی اجازت ہے۔

گذشتہ ہفتے قازقستان کے صدر نے ملک میں بڑھتے ہوئے کورونا متاثرین کے پیش نظر ہسپتالوں میں 50 فیصد اضافی بستروں کا انتظام کرنے کا حکم دیا جبکہ المتی میں ایک سٹیڈیم میں عارضی ہسپتال بھی قائم کیا گیا ہے۔

خیال رہے نہ صرف قازقستان بلکہ امریکہ، یورپ ، آسٹریلیا، جنوبی کوریا اور چین سمیت متعدد ممالک میں ایک بار پھر کورونا وائرس کے کیسز سامنے آئے ہیں جس پر ماہرین نے دوسری لہر کا خدشہ ظاہرکیا ہے۔

اس وقت دنیا بھر میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک کروڑ 14 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے جبکہ اب تک اس مرض کے باعث پانچ لاکھ 27 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

دنیا میں کورونا سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والا ملک امریکہ ہے جہاں 26 لاکھ سے زائد افراد اس مرض سے متاثر ہیں جبکہ وہاں اب تک سوا لاکھ سے زیادہ لوگوں کی موت ہوئی ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -