15 جولائی سے کورونا میں اضافہ نہ ہوا تو تعلیمی ادارے کھول سکتے ہیں ،ترجمان بلوچستان حکومت

15 جولائی سے کورونا میں اضافہ نہ ہوا تو تعلیمی ادارے کھول سکتے ہیں ،ترجمان ...
15 جولائی سے کورونا میں اضافہ نہ ہوا تو تعلیمی ادارے کھول سکتے ہیں ،ترجمان بلوچستان حکومت

  

کوئٹہ (ڈیلی پاکستان آن لائن)ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی نے کہاہے کہ سمارٹ لاک ڈاﺅن کے مثبت نتائج سامنے آرہے ہیں، ہسپتالوں میں مریضوںکی شرح میں 50 فیصدکمی آئی ،15 جولائی سے کورونا میں اضافہ نہ ہوا تو تعلیمی ادارے کھولنے میں مشکل نہیںہوگی ،کورونا کیسز کی موجودہ شرح رہی یا مزید کم ہوئی تو تعلیمی ادارے کھول سکتے ہیں ۔

ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی نے میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ بلوچستان کے کئی علاقوں میں سمارٹ لاک ڈاﺅن ہے،لوگ ایس او پیز کاخیال نہیں رکھیں گے تو کورونا کیسز بڑھ سکتے ہیں، لیاقت شاہوانی نے کہاکہ عوام نے تعاون نہیں کیاتو سمارٹ لاک ڈاﺅن میں توسیع کریں گے۔

انہوں نے کہاکہ مئی کے پہلے 5 دن 475 کورونا کیسز مثبت آئے تھے، کوئٹہ میں لوگ ایس او پیز پر عملدرآمد کررہے ہیں جو خوش آئندہے ،عید پر بھی لوگوں کو ایس او پیز پر عملدرآمدیقینی بناناہو گا۔

ترجمان بلوچستان حکومت نے کہاکہ سمارٹ لاک ڈاﺅن کے مثبت نتائج سامنے آرہے ہیں، ہسپتالوں میں مریضوں کی شرح میں 50 فیصدکمی آئی ،لیاقت شاہوانی نے کہاکہ تعلیمی ادارے 15 جولائی تک بند ہیں، ممکن ہواتو فیز کے حساب سے الگ شفٹوں میں تعلیمی ادارے کھولیں گے ۔

ترجمان بلوچستان حکومت نے کہاکہ 15 جولائی سے کورونا میں اضافہ نہ ہوا تو تعلیمی ادارے کھولنے میں مشکل نہیں ہوگی ،کورونا کیسز کی موجودہ شرح رہی یا مزید کم ہوئی تو تعلیمی ادارے کھول سکتے ہیں ،انہوں نے کہاکہ وزیراعظم نے بلوچستان کیلئے نوکریوں کے کوٹے پر عملدرآمد کی ہدایت کی ہے ۔

مزید :

قومی -علاقائی -بلوچستان -کوئٹہ -