پہلی مرتبہ 50فیصدتجاویز کو بجٹ کا حصہ بنایاگیا: صدر راولپنڈی چیمبر

پہلی مرتبہ 50فیصدتجاویز کو بجٹ کا حصہ بنایاگیا: صدر راولپنڈی چیمبر

  



راولپنڈی ( کامرس ڈیسک ) راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسڑی کے صدر ڈاکٹر شمائل داﺅد آرائیں نے کہا ہے کہ وفاقی بجٹ برائے سال 2014-15 کاروبار دوست اور متوازن بجٹ ہے جس میں پہلی مرتبہ کاروباری برادری کی 50فیصد تجاویز کو حکومت نے قبول کیا ہے جس سے کاروباری سرگرمیوں کو نہ صرف عروج ملے گا بلکہ حکومت کو ریونیو کے نئے ذرائع بھی میسر آئیں گے جن سے ملک کی مجموعی اقتصادی ترقی میں بہتری آئے گی، سروسز سیکٹر پر ٹیکس ، کارپوریٹ ٹیکس کی شرح میں کمی، نئے کمرشل بجلی و گیس کے میٹروں کے لئے این ٹی این سرٹیفکیٹ کی شرط،ہوٹلز اور شادی ہالز پر ود ہولڈنگ ٹیکس میں 50فیصد کمی وغیرہ کے قدامات کو تمام کاروباری برادری سراہتی ہے ، ان خیالات کا اظہار انہوں نے چیمبر میں تاجروں و صنعتکاروں کے ساتھ ایک ملاقات میں بجٹ پر تبادلہ خیال کرتے ہوئے کیا ، اس موقع پر سینئر نائب صدر ملک شاہد سلیم، نائب صدر محمد عالم چغتائی، اراکین مجلس عاملہ اور دیگر ممبران چیمبر بھی موجو دتھے۔ ڈاکٹر شمائل داﺅ دنے کہا کہ اس مرتبہ ملک کی تما م کاروباری برادری نے مشاورت کے ساتھ اور مشترکہ طور پر اپنی تجاویز حکومت کو پہنچائی تھیں ، جس کا مثبت اثر سامنے آیا ہے ، انہوں نے کہا کہ راولپنڈی چیمبر ملک کے دیگر چیمبر کے ساتھ رابطے میں ہے اور کوشش کر رہا ہے کہ تمام چیمبرز کی ایک مشترکہ پوسٹ بجٹ پریس کانفرنس کا انعقاد کیا جا سکے ۔

تا کہ تمام چیمبر کا حالیہ بجٹ کے حوالے سے موقف سامنے آ سکے ، جس کی تفصیل سے میڈیا کو آگا ہ کر دیا جائے گا ۔صدر آ ر سی سی آئی کا کہنا تھا کہ نا مساعد حالات کے باوجود افراط ذر کی شرح کو سنگل ڈیجٹ رکھنے اور زر مبادلہ کے ذخائر میں خاطر خواہ اضافہ بھی موجو دہ حکومت کا ایک احسن قدم ہے ، تا ہم کچھ شعبوں کو اُنکی ملکی ترقی میں کم شرکت کے باوجود زیادہ مراعات دی گئیں جس پر کاروباری برادری کے تحفظات بھی ہیں ، انہوں نے کہا کہ مجموعی طور پر موجود ہ حالات کے پیش نظر بجٹ کو کاروبار دوست اور ایک متوازن بجٹ کہا جا سکتا ہے ۔

مزید : کامرس