تھائی لینڈ کی مارشل لاء حکومت کا عوام کو خوش کرنے کا منفرد منصوبہ

تھائی لینڈ کی مارشل لاء حکومت کا عوام کو خوش کرنے کا منفرد منصوبہ
تھائی لینڈ کی مارشل لاء حکومت کا عوام کو خوش کرنے کا منفرد منصوبہ

  



بنکاک (نیوزڈیسک ) تھائی لینڈ کے فوجی حکمرانوں نے سیاسی بدامنی کے ستائے ہم وطنوں کو خوشیاں لوٹانے کے لئے ملک بھر میں سڑکوں کی صفائی، فوجی بینڈ کے کنسرٹ اور مفت حجامت کے پروگرام شروع کر دیئے۔ 22 مئی کو جمہوری حکومت کا تختہ الٹنے والے فوجی سربراہ جنرل پرایوتھ جان اوچا کاکہنا ہے کہ ہم وطنوں کے چہروں پر دوبارہ خوشیاں لوٹانا فوجی حکومت کی اولین ترجیح ہے، جسے نیشنل کونسل برائے امن و نظم (National Council For Peace and Order) کا نام دیا گیا ہے۔ قوم سے خطاب کرتے ہوئے جنرل پرایوتھ جان اوچا نے مزید کہا کہ تھائی لینڈ کے عوام گزشتہ 9 سال سے خوشیوں کو ترس رہے ہیں لیکن 22 مئی ان کے لئے خوشیوں بھرا دن تھا۔ اس موقع پر انہوں نے قوم کے سامنے نیا ملکی روڈ میپ بھی پیش کیا، جس کی بنیاد ’’قومی مفاہمت‘‘ پر رکھی گئی ہے۔ تھائی لینڈ کے مقامی میڈیا کے مطابق فوجی حکمرانوں نے لوگوں کا اعتماد حاصل کرنے کے لیے گھڑ سوار فوجی دستوں کو شہر کی سڑکوں سے کوڑا کرکٹ اٹھانے کی ذمہ داری سونپی ہے۔ تھائی فوجی اس جگہ بھی صفائی کرتے ہوئے نظر آئے جہاں گذشتہ ہفتے فوجی حکمرانوں کے خلاف احتجاج کیاگیا تھا۔ فوجی حکومت کے ترجمان جنرل ونتھائی سواری نے اعلان کیا ہے کہ جمعے کو ہفتہ وار ٹی وی پروگرام شروع کیا جا رہا ہے جس میں لوگوں کے سوالوں کے جواب دیئے جائیں گے۔ فوجی ترجمان نے سیاسی مخالفین کی گرفتاریوں کا دفاع کرتے ہوئے کہا کہ یہ سب کچھ ملک میں خوشیاں واپس لانے کی کوششوں کا حصہ ہے۔

مزید : بین الاقوامی