بجٹ میں غریب کوریلیف دینے کی بجائے امیر کے سرمائے کو محفوظ کیا گیا، ندیم خان ، محمد افضل

بجٹ میں غریب کوریلیف دینے کی بجائے امیر کے سرمائے کو محفوظ کیا گیا، ندیم خان ...

  



لاہور( محمد نواز سنگرا/انوسٹی گیشن سیل) عوام دوست نہیں حکمران دوست بجٹ پیش کیا گیا۔ روایتی بجٹ ہے جس میں عام آدمی کا گلا دبا یاگیا ہے کھانے پینے کی اشیا ء مہنگی کرنے سے عوام کا کچومر نکال دیا گیا ٹیکس اور بجلی چوری روکنے میں ناکام حکمران سال بعد غصہ عوام پر ٹھنڈا کرتے ہیں حکمران پاکستانیت اپنائیں ورنہ عوام غصہ قابو سے باہر ہو جائے گا روز نامہ پاکستان کی طرف سے کئے گئے سروے میں ندیم خان اور محمد افضل نے کہا کہ عوام دشمن بجٹ پیش کیا گیا جس میں غریب کوریلیف دینے کی بجائے امیر کے سرماے کو محفوظ کیا گیا ہے مسلم لیگ (ن)سے وابستہ امیدیں دم توڑنے لگی ہیں جس کے جلد نتائج سامنے آئیں گے وسیم خان نے کہا کہ بجٹ سے غریب کو چولہا جلانا مشکل ہو جائے گا حکمران کو پاکستانیت اپنانے کی ضرورت ہے شیخ طارق نے کہا کہ بجٹ مثبت اور منفی پہلوؤں کا حامل ہے لیکن عام آدمی پر توجہ کم دی گئی ہے۔مخدوم بھٹی اور ساحل علی نے کہا کہ روایتی بجٹ پیش کیا گیا کیونکہ پاکستان کی تاریخ میں عوام دوست بجٹ پیش نہیں کیا گیا بلکہ حکمران دوست بجٹ پیس کیا گیاجس میں دعوے تو بڑے ہوتے ہیں لیکن مفاد صرف سرمایہ دار ہی اٹھا سکتا ہے کھانے پینے کی اشیاء مہنگی کرنے سے عام آدمی کا کچومر نکالا گیا ہے۔تجمل نیازی اور مدثر افضل نے کہا کہ بجٹ عوامی امنگوں پر پورا نہیں اترتا وہ وقت دور نہیں جب عوامی غم وغصے کو روکنا مشکل ہو جائے گا حکمران جماعت ہوش کے ناخن لے ۔

حکمران گیس ،بجلی اور ٹیکس چوری روکنے کی بجائے سال بعد عوام پر غصہ ٹھنڈا کرتے ہیں۔عثمان یوسف اور عمر فاروق نے کہا کہ بجٹ میں بیروزگاری الاؤنس کا اعلان کرنا چاہیے تھا ہر بجٹ میں روز گار کے مواقع پیدا کیے جاتے ہیں لیکن ایسا کبھی ہو ا نہیں بیروزگاری اور مہنگائی میں دن بدن اضافہ ہو رہا ہے اور حکمران دعوؤں اور نعروں سے عوام کو بیوقوف بنا رہے ہیں بجٹ میں عام آدمی کا گلا دبا دیا گیا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...