جاپان میں تابکاری پانی کے اخراج کو روکنے کے لئے برف کی دیوار کی تعمیر

جاپان میں تابکاری پانی کے اخراج کو روکنے کے لئے برف کی دیوار کی تعمیر
جاپان میں تابکاری پانی کے اخراج کو روکنے کے لئے برف کی دیوار کی تعمیر

  



ٹوکیو( بیورورپورٹ) چاپان نے تابکاری پانی کے اخراج کو روکنے کے لئے فوکوشیما نیوکلیئر پاور پلانٹ کے گرد زیر زمین برف کی دیوار کی تعمیر شروع کر دی۔ رواں ہفتے کے اوائل میں انجینئرز نے نیوکلیر پاورپلانٹ پر کام شروع کر دیا ہے، اس دیوار کی تعمیر کا مقصد کئی ٹن پر مشتمل استعمال شدہ جوہری ایندھن یا تابکاری پانی کی قریبی بحرالکاہل میں لیکیج کو روکنا ہے۔ ایک امریکی ریڈیو نے چاپان کی طرف سے زیر زمین برف کی دیوار کی تعمیر کو ایک پاگل پن قرار دیتے ہوئے اس کی تعمیر پر سوالات اٹھائے ہیں، جن کا حکام نے جواب دیتے ہوئے کہا ہے کہ زمین میں نمی کی زیادہ مقدار اسے جلد منجمند کر دیتی ہے، اسی لئے نیوکلیئر پاور پلانٹ کے گرد ایک میل تک ہر تین فٹ بعد سوراخ کھود کر ان میں پائپ ڈال دیئے گئے ہیں۔ تابکاری پانی جب ان پائپوں تک پہنچے گا تو یہ منجمند ہو جائے گا۔ دوسرا سٹیل کی دیوار نہ بنانے کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمیں کچھ بہت بڑی چیز کی ضرورت تھی، جو بہت زیادہ گھنی ہو اور ریکٹر سے میلوں دور کام کر سکے، تو اس صورت میں لوہے کی دیوار مناسب نہیں۔ یہ ایک تکنیک ہے، جو سرنگوں کی تعمیر میں بھی استعمال ہوتی ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ برف کی اس دیوار کی تعمیر پر 5 سو ارب ڈالر خرچہ آئے گا۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی


loading...