مغربی مشروبات صحت کے دشمن

مغربی مشروبات صحت کے دشمن
مغربی مشروبات صحت کے دشمن

  



نیو یارک (نیوز ڈیسک) ہمارے ملک میں گیس والے مشروبات جیسا کہ کوکا کولا یا پیپسی وغیرہ کا استعمال کثرت سے کیا جاتا ہے جو کہ ایک تشویش ناک بات ہے کیونکہ ایک جدید تحقیق سے ثابت ہوا ہے کہ ان مشروبات میں مضر صحت مٹھاس کی مقدار اس سے اُس سے کہیں زیادہ ہوتیں ہیں جو کہ ان کے اوپر لکھی ہوتی ہیں۔ماہرین صحت نے واضح کیا ہے کہ کوکا کولا ، سپرائٹ، پیپسی،ماﺅنٹین ڈیو اور دیگر اس قسم کے مشروبات میں کثرت سے فرکٹوزپایا جاتا ہے۔جوکہ ذیابیطس کے علاوہ دل اور جگر کی بیماریوں کا باعث بھی بن رہا ہے۔ سائنسی جریدے ،’ نیوٹریشن‘ میں شائع ہونے والی یونیورسٹی آف سدرن کیلیفورنیا کی تحقیق میںبتایا گیا ہے کہ ان مشروبات میں پایا جانے والا فرکٹوز گلوکوز کی نڈبت 50فیصد زیادہ ہوتا ہے ، اور گلوکوز کو کو توانائی میں تبدیل ہو جاتا ہے لیکن فرکٹوز کو جگر چکنائی میں تبدیل کر دیتا ہے جو کہ متعدد بیماریوں کا باعث بنتی ہے۔ماہرین نے یہ نتائج 34مشروبات کے کیمیائی تجزیعے کے بعد اخذ کئے ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ انسانی جسم ان مشروبات میں پائی جانے والی مضر صحت مٹھاس کو برداشت نہیں کر سکتا۔

مزید : تعلیم و صحت


loading...