گرمیوں میں جسم کے اس حصے میں پڑنے والی خراشوں کا آسان ترین قدرتی علاج جانئے

گرمیوں میں جسم کے اس حصے میں پڑنے والی خراشوں کا آسان ترین قدرتی علاج جانئے
گرمیوں میں جسم کے اس حصے میں پڑنے والی خراشوں کا آسان ترین قدرتی علاج جانئے

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) گرمیوں کے موسم میں پسینے کے باعث عموماً لوگوں کو ٹانگوں کے درمیان کھجلی کی شکایت رہتی ہے۔ یہ کھجلی فنجائی کی انفیکشن کے باعث ہوتی ہے۔ اس سے چھٹکارہ پانے کے لیے کئی اینٹی فنگل ادویات مارکیٹ میں دستیاب ہیں مگر بہت کم لوگ جانتے ہیں کہ اس کے کئی قدرتی طریقہ ہائے علاج بھی ہیں۔ یہ انگریزی ادویات کی نسبت محفوظ طریقے ہیں کیونکہ ان کے سائیڈ ایفیکٹس نہیں ہوتے۔ ویب سائٹ healthyandnaturalworld کی رپورٹ کے مطابق اس کھجلی سے نجات کا ایک طریقہ یہ ہے کہ ”تین تین چمچ شہد کی مکھیوں کے چھتے کا موم، زیتون کا تیل اور خام شہد لیں۔ سب سے پہلے چھتے کے موم کو ایک برتن میں پگھلائیں۔ جب موم پگھل جائے تو اس میں آہستہ آہستہ شہد ڈالنا شروع کریں۔ شہد کے بعد اس میں زیتون کا تیل ڈالیں اور تب تک چمچ چلاتے جائیں جب تک یہ آمیزہ یکجان نہ ہوجائے۔اس آمیزے کو ٹھنڈا کر کے محفوظ کر لیں۔ اسے ریفریجریٹر میں 3ماہ تک محفوظ رکھا جا سکتا ہے۔جب کبھی آپ کو اس مخصوص جگہ پر کھجلی ہو، دن میں تین بار اس جگہ پر یہ آمیزہ لگالیں اور مسلسل چار ہفتے تک لگائیں۔ انشاء اللہ افاقہ ہو گا۔“ خوشبودار تیل بھی اس کھجلی کا بہترین علاج ہیں۔ اسطوخودوس کا تیل بھی اینٹی فنگل ہے اور اس کھجلی کا جلد خاتمہ کرتا ہے۔ اس کے علاوہ چائے کی پتی کا تیل بھی اس حوالے سے انتہائی مفید ہے۔ گینڈے کا تیل جلن سے نجات دلانے کی خصوصیت کے حوالے سے خاصی شہرت رکھتا ہے مگر یہ اس کھجلی کا بھی بہترین علاج ہے۔ ان تمام اقسام کے تیل کی کھجلی سے متاثرہ جگہ پر دن میں دو سے تین بار مالش کرنے سے مرض سے نجات مل جاتی ہے۔ اس کے علاوہ لہسن سے بھی اس کا علاج کیا جا سکتا ہے۔ لہسن بہترین اینٹی بیکٹیریا اور اینٹی فنگل ہے اور جلن کے احساس سے بھی نجات دلاتا ہے۔ لہسن سے کھجلی کا علاج کرنے کے لیے تازہ لہسن کی چند گٹھلیاں لیں اور کوٹ کر ان کا پیسٹ بنا لیں۔ خالص لہسن کا پیسٹ کھجلی کی جگہ پر لگانے سے تکلیف کا احساس ہو سکتا ہے لہٰذا اس میں شہد، زیتون یاناریل وغیرہ کا تیل ڈال کر آمیزہ بنا لیں۔اب اسے متاثرہ جگہ پر کچھ دیر کے لیے لگائیں، پھر دھو ڈالیں۔ دن میں تین سے چار بار یہ عمل دہرائے۔ جلد کھجلی سے نجات مل جائے گی۔

مزید : تعلیم و صحت