ریاست کسی امتیاز کے بغیر عوام کو تعلیم اورصحت کی مفت فراہمی یقینی بنائے ،الطاف شاہد

ریاست کسی امتیاز کے بغیر عوام کو تعلیم اورصحت کی مفت فراہمی یقینی بنائے ...

لاہور( نمائندہ خصوصی)اوورسیز ہیومن رائٹس واچ کے مرکزی صدر چودھری محمدالطاف شاہد نے کہا ہے کہ ریاست کسی امتیاز کے بغیر عوام کو تعلیم اورصحت کی مفت فراہمی یقینی بنائے جبکہ ملک میں تعلیمی ایمرجنسی لگائی جائے ۔تعلیمی اورطبی بجٹ کاحجم کئی گنا بڑھناچاہئے۔عوام کی قوت برداشت کامزیدامتحان نہ لیا جائے وہ فوری ریلیف کے مستحق اورمنتظر ہیں۔''جان ہے توجہاں ہے ''کی روسے اس وقت ملک وقوم کوتعمیراتی نہیں بلکہ فلاحی منصوبوں کی ضرورت ہے۔سرمایہ داراشرافیہ نے پاکستان میں تعلیم اورصحت کوبھی منفعت بخش تجارت بنالیاہے جس کے نتیجہ میں ناخواندگی اورپسماندگی کوتقویت ملی۔وہ ایک اجلا س سے خطاب کررہے تھے ۔چودھری محمدالطاف شاہد نے مزید کہا کہ مفلسی کے مارے لوگ اپنے معصوم بچوں کو مادرعلمی کی بجائے ورکشاپوں،فیکٹریوں ا ورکارخانوں میں بھجوانے پرمجبور ہیں۔ مفت تعلیم کی بجائے مفت لیپ ٹاپ کی تقسیم درحقیقت شعبدہ بازی ہے ۔انہوں نے کہا کہ قرآن اور آئین عوام کے پیسے پرسیاست چمکانے اورملک میں سیاسی رشوت کابازارگرم کرنے کی اجازت نہیں دیتا ۔ ارباب اقتدارنے قومی وسائل کارخ اپنے سیاسی مفادات کی طرف موڑلیا جبکہ عام شہری اپنے بنیادی حقوق سے محروم ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم اورصحت کے شعبہ میں مخصوص مافیا کی اجارہ داری نے عام آدمی کوخواری کے سواکچھ نہیں دیا ۔عوام کاپیسہ عوام کی مرضی ومنشاء سے اوران کی ویلفیئر پرصرف کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ حکمرانوں اورمنتخب نمائندوں کواندرون ملک وبیرون ملک مفت علاج کی سہولت حاصل ہے جبکہ عوام ا پنے ملک میں ایڑیاں رگڑ رگڑ کرمررہے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1