سید علی گیلانی اور میرواعظ کی مقبوضہ کشمیر یاسین ملک کی دوبارہ گرفتاری کی مذمت

سید علی گیلانی اور میرواعظ کی مقبوضہ کشمیر یاسین ملک کی دوبارہ گرفتاری کی ...

سرینگر(اے پی پی)مقبوضہ کشمیر میں کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی اوراپنے حریت فورم کے چیئرمین میرواعظ عمر فاروق نے جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین محمد یاسین ملک کی کئی روز کی مسلسل غیر قانونی نظر بندی سے رہائی کے فوراً ما بعد دوبارہ گرفتاری اور بھارتی پولیس کی طرف سے ان کے ساتھ توہین آمیز سلوک کی شدید مذمت کی ہے۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق سید علی گیلانی نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں کہا کہ بھارت آزادی پسند قیادت کا سیاسی طریقے سے مقابلہ کرنے میں ناکام ہو چکا ہے لہذا وہ غیر قانونی گرفتاریوں اور نظر بندیوں سے انکے حوصلے پست کرنا چاہتا ہے لیکن وہ اپنے مذموم عزائم میں ہرگز کامیاب نہیں ہوگا۔ میرواعظ عمر فاروق نے ایک بیان میں کہا کہ محمد یاسین ملک کی دوبارہ گرفتاری اور ان کے اہل خانہ کو ہراساں کرنے کی کارروائی انتظامیہ کی بوکھلاہٹ کا واضح ثبوت ہے۔

نام نہاد اسمبلی کے رکن انجینئر رشید نے محمد یاسین ملک پر تشدد اور گرفتار ی اور انکے اہلخانہ کو ہراساں کرنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ انتظامیہ آزادی پسند قیادت کا سیاسی طور پرمقابلہ کرنے میں بری طرح ناکام ہوئی ہے۔

مزید : عالمی منظر