کرپشن اور پاکستان ایک ساتھ نہیں چل سکتے، پاناما لیکس سے کرپٹ اشرافیہ کا چہرہ کھل کر سامنے آگیا: سراج الحق

کرپشن اور پاکستان ایک ساتھ نہیں چل سکتے، پاناما لیکس سے کرپٹ اشرافیہ کا چہرہ ...

لاہور(آئی این پی )امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہا ہے کہ کرپشن اور پاکستان ایک ساتھ نہیں چل سکتے، پانامالیکس کے بعد کرپٹ اشرافیہ کا چہرہ کھل کر سامنے آگیا، تحقیقات سے متعلق ٹی او آرز پر حکومت کا رویہ درست نہیں ہے۔وہ لاہور میں رمضان المبارک کے حوالے سے فوڈ پیکٹ تقسیم کی تقریب سے خطاب کررہے تھے ۔سراج الحق نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دنیا بھر میں کرسمس سمیت دیگر مذہبی تہواروں کی مناسبت سے اشیائے خورونوش میں کمی کردی جاتی ہے لیکن ہمارے یہاں ماہ مقدس کی آمد سے قبل ہی ہوش ربا اضافہ کردیا جاتاہے۔غریب لوگوں کو قطاروں میں لگ کر آٹا لینا پڑتا ہے حالانکہ یہ حکومت کی ذمے داری ہے کہ وہ مستحق خاندانوں کی کفالت کرے۔ امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھاکہ کرپشن اور پاکستان ایک ساتھ نہیں چل سکتے۔ پانامالیکس کے بعد کرپٹ اشرافیہ کا چہرہ کھل کر سامنے آگیا۔ تحقیقات سے متعلق ٹی او آرز پر حکومت کا رویہ درست نہیں ہے۔ سراج الحق نے ملک سے فوری طور پر کرپشن کے خاتمے اور تمام ذمے داروں کو کٹہرے میں قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہ کیا۔

مزید : صفحہ آخر