صوبائی حکومت عوام کے مسائل حل کرنے میں بری طرح ناکام ہوچکے ،ملک آفتاب

صوبائی حکومت عوام کے مسائل حل کرنے میں بری طرح ناکام ہوچکے ،ملک آفتاب

نوشہرہ(بیورورپورٹ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی رہنما ملک آفتاب خان نے کہا ہے کہ موجودہ صوبائی حکومت عوام کے مسائل حل کرنے میں بری طرح ناکام ہوچکے ہیں صوبہ خیبرپختونخوا میں امن امان کی صورتحال انتہائی خراب ہے مہنگائی، بیروزگاری عروج پر ہے یہی وجہ ہے کہ دیگرسیاسی پارٹیوں کے کارکن اے این پی میں شمولیت اختیار کررہے ہیں گزشتہ روز پاکستان پیپلزپارٹی، تحریک انصاف، جماعت اسلامی، مسلم لیگ اور دیگر سیاسی پارٹیوں کے کارکنوں کی اے این پی میں شمولیت سے اے این پی پراعتماد کااظہار ہے ان خیالات کااظہارانہوں نے اخبار نویسوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت خیبرلیکس پر خاموش بیٹھاہوا ہے جبکہ خیبرلیکس کی تحقیقاتی رپورٹ آچکی ہے لیکن تعجب کی بات ہے کہ نہ تو وزیرخزانہ کو سزا ہوئی اورنہ ایم ڈی بینک کو کرپشن کے خاتمے کی دعویدار خیبرپختونخوا میں پی ٹی آئی کی حکومت کے چیف ایگزیکٹیو جس نے مفاد پرستی کی بنیاد پر کئی سیاسی جماعتوں کے نظریات کے ساتھ غداری کرکے سب سے بڑی کرپشن کی ہے انہوں نے کہا کہ عمران خان نے طویل عرصہ اسلام آباد میں فضول احتجاجی دھرنوں پر اپنا اور قوم کا وقت ضائع کیا اور ہربات پر احتجاجی دھرنے کی دھمکی دیتاہے لیکن آج جب پشاو ر میں نرسسز اپنے حقوق کیلئے سڑکوں پرآگئی تو خیبرپختونخوا کی بزدل حکومت نے خواتین پر پولیس تشددکیا نرسز کے مطالبات جائز مطالبات ہیں کیونکہ کسی بھی جمہوری ملک میں کوئی بھی سرکاری اہلکار اپنے لئے سروس سٹریکچر کا مطالبہ کرسکتا ہے یہ ان کا جمہوری اور آئینی حق ہے نرسز احتجاج کے معاملے پر پنجاب حکومت پر تو عمران خان تنقید کے نشتر برسارہے ہیں جبکہ خیبرپختونخوا میں یہ حال ہے کہ نرسز پر لاٹھیاں برسارہی ہے کیا یہ انصاف اور نیا خیبرپختونخوا ہے خیبرلیکس تحقیقات ہمیں کسی صورت قبول نہیں کیونکہ یہ تحقیقات اس وزیر کے ذریعے کرائے گئے ہیں جسے خود صوبائی حکومت نے کرپشن کے الزام میں وزارت سے معزول کرایا تھا خیبرلیکس کے تحقیقات پشاور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس سے کرائے جائیں سی پیک منصوبہ پختونوں کی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے لیکن مرکزی اور صوبائی حکومتیں سی پیک میپ میں پختون بلٹ کو مسلسل نظرانداز کررہی ہے یہ مسئلہ حل ہونا چاہیے کیونکہ سی پیک میں پختون بلٹ کو نظرانداز کرنا پوری پختون قوم کی معاشی قتل عام تصورہوگی اور عوامی نیشنل پارٹی کسی بھی صورت پختونوں کی معاشی قتل عام نہیں ہونے دے گی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر